Saturday , November 25 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ ، آندھرا اور کرناٹک کے عازمین کے 14 قافلوں کی سعودی عرب روانگی

تلنگانہ ، آندھرا اور کرناٹک کے عازمین کے 14 قافلوں کی سعودی عرب روانگی

عازمین کے آخری قافلہ کی آج روانگی ، حج کیمپ کے کامیاب انعقاد پر اظہار مسرت
حیدرآباد۔21 اگست (سیاست نیوز) حج 2017ء کے لیے حیدرآباد امبارگیشن پوائنٹ سے تلنگانہ، آندھرا اور کرناٹک کے عازمین کے 14 قافلے سعودی عرب روانہ ہوچکے ہیں۔ 22 اگست کو عازمین حج کا آخری قافلہ سوئے حرم روانہ ہوگا جس کے بعد حج کیمپ کا عملاً اختتام عمل میں آئے گا۔ 14 اگست سے عازمین حج کے قافلوں کی روانگی کا آغاز ہوا تھا۔ پہلے مرحلہ میں تلنگانہ کے عازمین روانہ ہوئے تھے، جبکہ 18 اگست سے آندھراپردیش کے قافلوں کا آغاز ہوا۔ اسپیشل آفیسر تلنگانہ حج کمیٹی پروفیسر ایس اے شکور نے بتایا کہ 14 قافلوں کے ذریعہ ابھی تک 5898 عازمین سعودی ایرلائنس کی خصوصی پروازوں سے روانہ ہوچکے ہیں اور وہ عمرہ کی ادائیگی کے بعد حج کی تیاریوں میں مصروف ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہر فلائٹ میں 450 عازمین روانہ ہوئے جبکہ 50 عازمین کی سعودی ایرلائنس کی شیڈولڈ فلائٹ سے روانگی عمل میں آئی۔ عازمین کے 13 ویں قافلہ کو رات دیر گئے 2 بجے حج ہائوز نامپلی سے ایرپورٹ روانہ کیا گیا۔ رکن قانون ساز کونسل آندھراپردیش احمد شریف، صدرنشین آندھراپردیش حج کمیٹی مومن احمد حسین اور اسپیشل آفیسر تلنگانہ حج کمیٹی پروفیسر ایس اے شکور نے اس قافلہ کو وداع کیا۔ مولانا نذیر احمد سبیلی نے مناسک حج بیان کئے اور عازمین حج کو ضروری مشورے دیئے۔ 14 ویں قافلہ کی شام 4 بجے روانگی عمل میں آئی اور اس قافلے نے رات 8 بجے سعودی عرب کے لیے پرواز کیا۔ دونوں قافلوں میں آندھراپردیش کے عازمین شامل ہیں۔ احمد شریف ایم ایل سی نے عازمین حج سے خطاب کرتے ہوئے ملک اور ریاست کی ترقی و امن وامان کے لیے دعائوں کی اپیل کی۔ انہوں نے کہا کہ مناسک حج کی ادائیگی کے سلسلہ میں عازمین کو تحمل سے کام لینا چاہئے۔ احمد شریف نے تلنگانہ حج کمیٹی کی جانب سے کئے گئے انتظامات کی ستائش کی۔ حج ہائوز میں تمام ضروری امور کی تکمیل کے بعد عازمین کو آر ٹی سی کی خصوصی بسوں کے ذریعہ ایرپورٹ کے خصوصی ٹرمینل منتقل کیا گیا جہاں پروفیسر ایس اے شکور نے طیارے کی پرواز تک انتظامات کی نگرانی کی۔ عازمین حج کا آخری قافلہ جو 449 عازمین پر مشتمل ہوگا، کل صبح 8 بجے حج ہائوز سے روانہ ہوگا جبکہ دو پہر 12 بجے طیارہ پرواز کرے گا۔ پروفیسر ایس اے شکور نے بتایا کہ حج کیمپ کے آغاز کے بعد سے ابھی تک جملہ 14 عازمین نے اپنا سفر منسوخ کردیا ہے۔ تاہم سنٹرل حج کمیٹی کی جانب سے ان کی جگہ ویٹنگ لسٹ الاٹ نہیں کی گئی۔ مکہ مکرمہ میں حیدرآبادی رباط میں 1287 عازمین کو قیام کی گنجائش فراہم کی گئی ہے۔ ناظر رباط حسین محمد الشریف کی راست نگرانی میں تین وقت کے کھانے اور دیگر سہولتوں کا انتظام کیا گیا۔ خادم الحجاج وقتاً فوقتاً اسپیشل آفیسر سے ربط قائم کرتے ہوئے حاجیوں کے خیریت کی اطلاع دے رہے ہیں۔ حیدرآباد سے جانے والے تمام عازمین خیریت سے ہیں۔ بتایا جاتا ہے کہ کل ایک عازم کی طبیعت اچانک بگڑ گئی تاہم ہاسپٹل میں ابتدائی طبی امداد کے بعد انہیں ڈسچارج کردیا گیا۔ حج کیمپ کے کامیاب انعقاد پر ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی نے اطمینان کا اظہار کیا اور اسپیشل آفیسر پروفیسر ایس اے شکور اور سکریٹری اقلیتی بہبود سید عمر جلیل کو مبارکباد پیش کی۔ اسی دوران ویٹنگ لسٹ کے 49 عازمین میں سے دو نے اپنا سفر منسوخ کردیا ہے۔ اس طرح 47 عازمین کو 26 اگست کو ممبئی سے روانگی کے انتظامات کئے جارہے ہیں۔ سنٹرل حج کمیٹی نے 47 کے منجملہ 27 عازمین کی روانگی کے پروگرام کو منظوری دی ہے۔ توقع ہے کہ باقی کی منظوری کل تک حاصل ہوجائے گی۔ تلنگانہ حج کمیٹی انہیں خصوصی بسوں کے ذریعہ ممبئی روانہ کرے گی۔

TOPPOPULARRECENT