Saturday , September 22 2018
Home / ہندوستان / تلنگانہ بل پر حکم التواء سے سپریم کورٹ کا انکار

تلنگانہ بل پر حکم التواء سے سپریم کورٹ کا انکار

نئی دہلی ۔ 7 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) سپریم کورٹ نے پارلیمنٹ میں تلنگانہ بل کی پیشکشی کے خلاف حکم التواء جاری کرنے سے آج انکار کردیا اور کہا کہ وہ اس مرحلہ پر کوئی مداخلت کرنا نہیں چاہتا۔ جسٹس ایچ ایل دتو اور ایس اے بوبڈے نے آندھراپردیش کی تقسیم کے ذریعہ نئی ریاست تلنگانہ کے قیام کو چیلنج کرتے ہوئے پیش کرکے دائر کردہ تمام درخواستوں کو م

نئی دہلی ۔ 7 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) سپریم کورٹ نے پارلیمنٹ میں تلنگانہ بل کی پیشکشی کے خلاف حکم التواء جاری کرنے سے آج انکار کردیا اور کہا کہ وہ اس مرحلہ پر کوئی مداخلت کرنا نہیں چاہتا۔ جسٹس ایچ ایل دتو اور ایس اے بوبڈے نے آندھراپردیش کی تقسیم کے ذریعہ نئی ریاست تلنگانہ کے قیام کو چیلنج کرتے ہوئے پیش کرکے دائر کردہ تمام درخواستوں کو مسترد کردیا، جن میں مرکز کو اس ضمن میں ضروری ہدایت جاری کرنے کی اپیل کی گئی تھی۔ بنچ نے 18 نومبر 2013ء کو جاری کردہ اپنے حکم بھی حوالہ دیا، جس میں کہا گیا تھا کہ ریاست کی تقسیم کی مخالفت سے متعلق کسی درخواست پر غور فی الحال قبل ازوقت ہوگا۔

بنچ نے کہا کہ ’’18 نومبر 2013ء اور آج کے درمیان کے مرحلہ میں ہم نے کوئی تبدیلی محسوس نہیں کی ہے۔ چنانچہ اس مرحلہ پر ہم کسی مداخلت سے انکار کرتے ہیں‘‘۔ تاہم یہ وضاحت بھی کی کہ ان درخواستوں میں بیان کردہ نکات پر کسی متعاقب مرحلہ پر غور کیا جاسکتا ہے۔ بنچ نے تقریباً دیڑھ گھنٹہ کی سماعت کے بعد مختصر احکام جاری کئے۔ سماعت کے دوران تمام درخواست گذار حاضر تھے۔

TOPPOPULARRECENT