Tuesday , December 12 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ بھون میں ٹی آر ایس کی یوم انضمام حیدرآباد تقریب

تلنگانہ بھون میں ٹی آر ایس کی یوم انضمام حیدرآباد تقریب

نظام دکن کی ستائش، ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی، وزیر داخلہ نرسمہا ریڈی اور دیگر کا خطاب
حیدرآباد۔/17ستمبر، ( سیاست نیوز) ٹی آر ایس کی جانب سے تلنگانہ بھون میں آج حیدرآباد اسٹیٹ کا انڈین یونین میں انضمام کا دن منایا گیا۔ یوم انضمام کے موقع پر وزیر داخلہ این نرسمہا ریڈی نے قومی پرچم لہرایا۔ اس موقع پر ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی رکن قانون ساز کونسل، سرینواس ریڈی اور ٹی آر ایس کے دیگر قائدین موجود تھے۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے وزیر داخلہ نے کہا کہ 17ستمبر کو بادشاہت سے جمہوریت کے دور کا تلنگانہ اسٹیٹ میں آغاز ہوا ہے۔ انڈین یونین میں انضمام کے بعد حیدرآباد اسٹیٹ میں جمہوری نظام کا احیاء عمل میں آیا۔ انہوں نے کہا کہ اس یوم کو یوم آزادی قرار دینا مناسب نہیں ہے کیونکہ نظام حیدرآباد نے اپنی ریاست کو انڈین یونین میں ضم کرنے سے اتفاق کرلیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ حیدرآباد اسٹیٹ کو بعد میں آندھرا پردیش میں ضم کردیا گیا تھا تاہم ٹی آر ایس نے عوامی مدد سے جدوجہد کرتے ہوئے تلنگانہ ریاست حاصل کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ٹی آر ایس حکومت عوام کی بھلائی کیلئے ہر ممکن اقدامات کررہی ہے۔ وزیر داخلہ نے کہا کہ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ کی اولین ترجیحات عوامی بھلائی ہے اور ہندوستان کی کسی بھی ریاست میں اس قدر فلاحی اقدامات کا آغاز نہیں کیا گیا جتنے تلنگانہ میں شروع کئے گئے ہیں۔ ملک کی تمام ریاستوں کی نظریں تلنگانہ پر ٹکی ہیں اور تلنگانہ کی اسکیمات کی تفصیلات دیگر ریاستیں حاصل کررہی ہیں۔ وزیر داخلہ نے زرعی شعبہ کی ترقی کیلئے آبپاشی پراجکٹس کی تعمیر کا حوالہ دیا اور کہا کہ اپوزیشن پراجکٹس کی تعمیر میں رکاوٹ پیدا کرنے کی کوشش کررہی ہے۔ ترقیاتی اقدامات میں رکاوٹ پیدا کرنا دراصل عوام دشمنی کے مترادف ہے۔ انہوں نے نظام حیدرآباد کی ستائش کی اور کہا کہ نظام نے رعایا پروری کی بہترین مثال قائم کی ہے۔ حیدرآباد میں آج بھی نظام حیدرآباد کی کئی یادگاریں موجود ہیں۔انہوں نے آندھرائی حکمرانوں پر تلنگانہ و حیدرآباد کو نظرانداز کرنے کا الزام عائد کیا۔

TOPPOPULARRECENT