Monday , September 24 2018
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ ریاست کا خواب بہت جلد شرمندہ تعبیر

تلنگانہ ریاست کا خواب بہت جلد شرمندہ تعبیر

حیدرآباد ۔ 8 فبروری (سیاست نیوز) کانگریس کے رکن قانون ساز کونسل مسٹر فاروق حسین نے سپریم کورٹ کی جانب سے مخالف تلنگانہ تمام 9 درخواستوں کو خارج کردینے کا خیرمقدم کرتے ہوئے کہا کہ بہت جلد علحدہ تلنگانہ ریاست کی تشکیل کا خواب شرمندہ تعبیر ہوگا۔ مسٹر فاروق حسین نے کہا کہ کانگریس پارٹی علحدہ تلنگانہ ریاست تشکیل دینے کے معاملے میں عہد کی

حیدرآباد ۔ 8 فبروری (سیاست نیوز) کانگریس کے رکن قانون ساز کونسل مسٹر فاروق حسین نے سپریم کورٹ کی جانب سے مخالف تلنگانہ تمام 9 درخواستوں کو خارج کردینے کا خیرمقدم کرتے ہوئے کہا کہ بہت جلد علحدہ تلنگانہ ریاست کی تشکیل کا خواب شرمندہ تعبیر ہوگا۔ مسٹر فاروق حسین نے کہا کہ کانگریس پارٹی علحدہ تلنگانہ ریاست تشکیل دینے کے معاملے میں عہد کی پابند ہے۔ کل مرکزی کابینہ اور کانگریس کور کمیٹی نے تلنگانہ بل کو منظوری دیتے ہوئے تمام رکاوٹوں کو دور کردیا ہے۔ بہت جلد راجیہ سبھا اور پارلیمنٹ میں تلنگانہ کا بل بھاری اکثریت سے منظور ہونے کی توقع کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ تلگودیشم اور وائی ایس آر کانگریس پارٹی نے عوام کو دھوکہ دیا ہے۔ کانگریس پارٹی وعدے پر قائم ہے۔

سپریم کورٹ کی جانب سے مخالف تلنگانہ درخواستوں کو مسترد کردیئے جانے کے بعد علحدہ تلنگانہ ریاست کی تشکیل کیلئے راہیں ہموار ہوگئی ہیں۔ انہوں نے حیدرآباد کو مرکز کا زیرانتظام علاقہ نہ بنانے کے فیصلے کا خیرمقدم کرتے ہوئے کہا کہ حیدرآباد کے لاء اینڈ آرڈر کی ذمہ داری گورنر کے حوالے کرنے کے معاملے میں بھی کانگریس ہائی کمان اور مرکزی حکومت دوبارہ غور کریں۔ مسٹر فاروق حسین نے علحدہ تلنگانہ ریاست میں اسمبلی حلقوں کی تعداد کو 119 سے بڑھا کر 153 کردینے کی تلنگانہ بل میں گنجائش فراہم کرنے کا خیرمقدم کرتے ہوئے کہا کہ اس سے سرکاری مشنری کو عوام تک پہنچنے میں نہ صرف آسانی ہوگی بلکہ سیاسی مسائل بھی بڑی حد تک حل ہوسکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ریاست کی تقسیم سے سیما آندھرا سے کوئی ناانصافی نہیں ہوگی۔ سیما آندھرا کے مسائل حل کرنے کے معاملے میں ضرورت پڑی تو ہم تعاون کرنے کیلئے بھی تیار ہیں۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT