Sunday , June 24 2018
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ سروے کے خلاف سپریم کورٹ سے رجوع ہونے کا فیصلہ

تلنگانہ سروے کے خلاف سپریم کورٹ سے رجوع ہونے کا فیصلہ

حیدرآباد میںمقیم سیما آندھرا عوام کو نشانہ بنانے کی سازش ،حکومت آندھرا پردیش کا الزام

حیدرآباد میںمقیم سیما آندھرا عوام کو نشانہ بنانے کی سازش ،حکومت آندھرا پردیش کا الزام
حیدرآباد 10 اگست ( سیاست ڈاٹ کام) حکومت آندھرا پردیش نے الزام عائد کیا ہے کہ پڑوسی ریاست تلنگانہ حکومت کی جانب سے 19 اگست کو کئے جانے والے سروے کا مقصد عظیم تر حیدرآباد میں سکونت پذیر سیما آندھرا کے عوام کی شناخت کو نشاندہی کرنا ہے چنانچہ حکومت آندھرا پردیش نے اس سروے کے خلاف سپریم کورٹ سے رجوع ہونے کا فیصلہ کرلیا ہے۔ حکومت آندھرا پردیش کا استدلال ہے کہ حکومت تلنگانہ اپنے مختلف اقدامات کے ذریعہ آندھرا پردیش تنظیم جدید قانون کی روح و منشا کی خلاف ورزی کررہی ہے۔ آندھراپردیش کے وزراء نے کہا کہ مجوزہ سروے میں بعض ایسے سوالات کہ مرد / خاتون کس ریاست سے تعلق رکھتے ہیں، کونسی زبان بولتے ہیں اور کب حیدرآباد منتقل ہوئے تھے واضح طور پر سیما آندھرا عوام کو نشانہ بنانے کے مقصد پر مبنی ہے۔آندھراپردیش کے وزیر فروغ انسانی وسائل گنٹا سرینواس نے خبردار کیا کہ ہمارے طلباء ، ملازمین اور چھوٹے کاروبار سے وابستہ افراد اگر وطنیت یا مقامی موقف کے عنوان پر متاثر کئے جاتے ہیں تو ہم خاموش تماشائی بنے نہیں بیٹھیں گے ۔ ہم سپریم کورٹ سے رجوع ہوتے ہوئے دستور کے مطابق انصاف حاصل کریں گے۔ گنٹا سرینواس نے کہا کہ حکومت تلنگانہ کا مجوزہ سروے علاقائی دہشت گردی کے مترادف ہے جس کے ذریعہ چیف منسٹر کے سی آر سیاسی فائدہ اٹھانا چاہتے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT