Wednesday , December 13 2017
Home / Top Stories / تلنگانہ شہری کو قتل کیس میں معافی

تلنگانہ شہری کو قتل کیس میں معافی

سعودی تاجر کی رحمدلی ۔ خون بہا کے طور پر 1.80 کروڑ روپئے ادا کئے
حیدرآباد ۔ 14 ۔ جنوری : ( سیاست نیوز) : سعودی عرب میں تارکین وطن کے ساتھ زیادتیوں کے واقعات کے بارے میں شکایت عام ہے لیکن سعودی باشندوں کی رحمدلی اور فراخدلی بھی کسی سے پوشیدہ نہیں ۔ تلنگانہ کے ایک شہری کو قتل کیس میں معافی دلانے کی کوشش کرتے ہوئے سعودی تاجر عود بن گورہیا الیامی نے نظام آباد کے شہری سائربو لمبادری کو ایک سعودی شہری کے ساتھ بحث و تکرار اس کے قتل میں ملوث ہونے کے کیس سے بری کروانے میں مدد کی ہے ۔ تلنگانہ کے اس شہری کو سعودی عرب کے قانون کے مطابق سزائے موت دی جانے والی تھی مگر سعودی تاجر نے مقتول کے خاندان والوں کو لمبادری کی جانب سے خون بہا ادا کردیا ۔ یہ رقم 1.3 ملین سعودی ریال ہے جس کی ہندوستانی قدر 1.80 کروڑ روپئے ہوتی ہے ۔ مقتول کے خاندان نے خون بہا کے طور پر یہ رقم قبول کر کے معاف کردیا ۔ سعودی عرب کے علاقہ نجران میں ایک فارم میں کام کرنے کے دوران 8 سال قبل اس کا سعودی شہری سے جھگڑا ہوا تھا اور اس بحث کے دوران اس کا قتل ہوگیا ۔ اس پورے مسئلہ کو نظام آباد کی رکن پارلیمنٹ کے کویتا نے اٹھا کر وزیر خارجہ سشما سوراج سے بات چیت کی تھی ۔ سعودی شہری کے خاندان والوں نے رقم لے کر معافی دیدی اب عدالت سے رہائی ملنا باقی ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT