Thursday , June 21 2018
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ میں اردو کی بقاء اور ترویج کیلئے چیف منسٹر سے موثر نمائندگی کا تیقن

تلنگانہ میں اردو کی بقاء اور ترویج کیلئے چیف منسٹر سے موثر نمائندگی کا تیقن

جدہ میں گلف ایمپلائز فورم و اردو اکیڈیمی جدہ کی یوم تاسیس تلنگانہ تقاریب ، عبدالحکیم کا خیر مقدم

جدہ میں گلف ایمپلائز فورم و اردو اکیڈیمی جدہ کی یوم تاسیس تلنگانہ تقاریب ، عبدالحکیم کا خیر مقدم

جدہ ۔ 13 ۔ جون : ( ای میل ) : جدہ کی دو فعال ومعروف تنظیمیں تلنگانہ گلف ایمپلائز فورم اور اردو اکیڈمی جدہ نے جشنِ تاسیس تلنگانہ مناتے ہوئے عمرے کی غرض سے تشریف لائے ہوئے ٹی آر ایس کے لیڈر ، اردو اکیڈمی آندھرا پردیش کے سابق نائب صدر نشین جناب عبدالحکیم کے اعزاز میں ایک خیرمقدمی تقریب منعقد کی۔ تلنگانہ گلف ایمپلائز فورم اور اردو اکیڈمی جدہ کے اراکین اور مہمانوں نے ماسٹر شیف ہوٹل میں شرکت کی ۔ جلسے کی نظامت اردو اکیڈمی جدہ سے وابستہ اسلم افغانی نے کی اور سب سے پہلے جدہ اور حیدرآباد کے قاری محمد نور کو قرأت کلامِ پاک کی سعادت حاصل کرنے شہ نشین پر بلوایا اور بارگاہ رسالت مآب ؐمیں ہدیہ نعت پیش کرنے کے لئے نعت خواں خالد حسین کو مدعو کیا جنہوں نے اپنی پرسوز آواز میں نعت سناکر ایک سماں باندھ دیا۔ خطبہ استقبالیہ اور اردو اکیڈمی جدہ کی کارکردگی سے واقف کرواتے ہوئے صدر جمال قادری نے کہا کہ جدہ میں 2001 ء سے ایک عظیم الشان سالانہ پروگرام ہندوستان کے اولین وزیر تعلیم مولانا ابولکلام آزاد کی یاد میں بعنوان ’’یومِ قومی تعلیم ‘‘ منعقد کیا جاتا ہے جس میں ہر سال ہندوستان کی مایہ ناز شخصیتوں کو مدعو کیا جاتا ہے۔ اس کے علاوہ حج۔ عمرے یا سرکاری دوروں پر آنے والے اردوداں حضرات کے اعزاز میں استقبالیہ اور ان کی خدمات کو خراج تحسین پیش کیا جاتا ہے۔ جمال قادری نے جناب عبدالحکیم کی خدمات کا ذکر کرتے ہوئے بتا یا کہ جب جب اردو اکیڈمی جدہ نے انہیں اردو مدارس کے ناگفتہ بہ حالات پر توجہ دلائی اور ایسے مدارس کی نشاندہی کی ، موصوف نے شخصی طور پر وہاں کے مسائل حل کرنے میں دلچسپی لی اور ممکنہ حد تک ان کو حل بھی کیا۔ جناب حافظ محمد بانعیم نے اپنے خطاب میں سماجی و فلاحی خدمات کی اسلام میں اہمیت پر روشنی ڈالی اور حاضرین سے اپنا کچھ وقت ایسے کاموں میں لگانے اور پریشان حال لوگوں کی خدمت میں دامے درمے سخنے مدد کرنے پر زور دیا۔ انگریزی اخبار وشواس کے مدیر جناب سید عبد القدیر نے قوم کو فلاحی اور سماجی خدمات کے لئے آگے آنے کی ضرورت پر زور دیا ۔ معظم علی افتخار نے تنظیم کی ہئیت پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ ان کی تنظیم میں اہمیت صرف خدمت خلق کی ہے۔حیدرآباد میں اردو اکیڈمی جدہ کے سرپرست اعلی جناب آصف صمدانی نے بھی نمایاں خدمات انجام دیں۔ آخر میں مہمان خصوصی عبدالحکیم نے دونوں تنظیموں کا شکریہ ادا کیا کہ انہوں نے اس تقریب کے ذریعہ بے شمار تلنگانہ کے باشندوں اور محبان اردو سے ملاقات کا ایک موقع فراہم کیا۔ عبدالحکیم نے کہا کہ وہ چیف منسٹر سے اردو کی بقا اور ترویج کے لئے جو نکات پیش کئے گئے ہیں ان پر بات کریں گے اور انہیں نافذ العمل کرنے کی پوری پوری کوشش کریں گے۔ انہوں نے تلنگانہ گلف ایمپلائز فورم کی خدمات کو سراہتے ہوئے کہا کہ یہ لوگ گزشتہ دس سال سے بلاتفریق قوم و ملت کے افراد کی خدمات انجام دے رہے ہیں اور تلنگانہ ریاست کے قیام کے لئے اس کی جدوجہد میں مسلسل شامل رہے ہیں۔ عبدالحکیم نے اعجاز خان ، سید خواجہ وقارالدین اور شمیم کوثر کی خدمات کو خراج تحسین پیش کیا ۔محمد عباس خان نے تمام حاضرین کا شکریہ ادا کیا ۔

TOPPOPULARRECENT