Saturday , February 24 2018
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ میں اسکیمات سے استفادہ کیلئے آدھار کالزوم نہیں

تلنگانہ میں اسکیمات سے استفادہ کیلئے آدھار کالزوم نہیں

مارچ 2018سے آدھارکو لازمی قرار دیا جائے گا۔ ای راجندر کا بیان
حیدرآباد ۔15۔ نومبر (سیاست نیوز) وزیر فینانس ای راجندر نے کہا کہ حکومت کی اسکیمات سے استفادہ کیلئے فی الوقت آدھار کارڈ کا لزوم نہیں ہے۔ مرکزی حکومت نے استعمال کو آدھار سے مربوط کرنے کیلئے مارچ 2018 ء تک مہلت مقرر کی ہے۔ کونسل میں وقفہ سوالات کے دوران ای راجندر نے بتایا کہ مرکزی حکومت نے آدھار لنکیج کی مہلت 31 مارچ 2018 ء مقرر کی ہے ، لہذا فی الوقت آدھار کی پیشکشی سرکاری اسکیمات سے استفادہ کیلئے لازمی نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ مارچ 2018 ء کے بعد تمام مرکزی اسکیمات کیلئے آدھار لازمی ہوجائے گا۔ انہوں نے کہا کہ اگر کسی شخص کے پاس آدھار نمبر نہ ہو تو وہ آدھار انرولمنٹ کیلئے درخواست داخل کرسکتا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ حکومت نے تمام بینکوں کو ہدایت دی ہے کہ آدھار انرولمنٹ سنٹرس قائم کریں تاکہ عوام کو سہولت ہو۔ انہوں نے کہا کہ آدھار کی تفصیلات کے افشاء کو روکنے کیلئے سی جی جی جیسے اداروں کی خدمات حاصل کی جائیں گی۔ کسی شخص کی آدھار پر مبنی شخصی تفصیلات افشاء کرنے والوں کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔ انہوں نے ان اندیشوں کو خارج کردیا کہ فلاحی اسکیمات کو آدھار سے مربوط کرنے کی صورت میں استفادہ کنندہ کی نجی تفصیلات کو خطرہ لاحق ہوسکتا ہے۔ کانگریس کے رکن ایس سدھاکر ریڈی نے اسکیمات کو آدھار سے لنک کرنے کو غیر محفوظ قرار دیا۔

TOPPOPULARRECENT