Thursday , September 20 2018
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ میں اقلیتی طبقات کی فلاح و بہبود اقدامات کی ستائش

تلنگانہ میں اقلیتی طبقات کی فلاح و بہبود اقدامات کی ستائش

ڈپٹی چیف منسٹر جناب محمد محمود علی کو تہنیت اور مومنٹو کی پیشکشی

ڈپٹی چیف منسٹر جناب محمد محمود علی کو تہنیت اور مومنٹو کی پیشکشی
حیدرآباد۔7ڈسمبر(سیاست نیوز) تلنگانہ میں اقلیتی طبقات کی فلاح وبہبود کے لئے حکومت تلنگانہ کی جانب سے معلنہ ایک ہزار تیس کروڑ کے بجٹ کا خیر مقدم کرتے ہوئے پرنس شہامت جاہ بہادر نے نائب وزیراعلی تلنگانہ ریاست الحاج محمد محمود علی کی قیامگاہ پہنچ کر انہیںتہنیت پیش کی۔ اس موقع پر مولانا محمد عثمان نقشبندی امام مکہ مسجد کے علاوہ رحیم اللہ خان نیازی ‘ محمد مسیح اللہ ‘ عبدالمقیت چندہ‘ شہنواز خان اور دیگر بھی موجود تھے۔نواب شہامت جاہ بہاد ر نے نائب وزیراعلی کو چارمینار کا تحفہ بھی پیش کیا اور شال پوشی کرتے ہوئے حکومت تلنگانہ کی جانب سے ریاست کے اقلیتی طبقات کی فلاح وبہبود کے اقدامات کی ستائش کی اور اس خصوص میںانہوں نے ایک تحریری یادواشت بھی نائب وزیر اعلی کے حوالے کیا جس میں وزیراعلی تلنگانہ ریاست مسٹر کے چندرشیکھر رائو کی اقلیتوں سے ہمدردی کی ستائش اور حکومت کے معلنہ اسکیمات بالخصوص شادی مبارک اسکیم کو متعارف کروانے پرریاست کے مسلمانوں کی جانب سے حکومت تلنگانہ کا شکریہ ادا کیاگیا۔بعد ازاں میڈیا سے بات کرتے ہوئے الحاج محمد محمو دعلی نے بھی پرنس شہا مت جاہ بہادر کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہاکہ تلنگانہ ریاست کی تشکیل یقینا ریاست حیدرآباد کا احیاء عمل میںلانا ہے۔ انہوں نے ریاست حیدرآباد بالخصوص آصف جاہی دور حکومت کو تلنگانہ ریاست کی ترقی کا مرہون منت قراردیتے ہوئے کہاکہ ٹی آر ایس کی چودہ سالہ جدوجہد میں ہمارے عظیم قائد مسٹر کے چندرشیکھر رائو نے علاقہ تلنگانہ میںآصف جاہی حکمرانوں کی جانب سے لائے گئے اصلاحات کا ذکر کرتے ہوئے تلنگانہ اور خاص طور پر شہر حیدرآباد کی ترقی کو آصف جاہی حکمرانوں کا مرہون منت قراردیاہے۔ انہوں نے کہاکہ تلنگانہ تحریک کے دوران ہی تلنگانہ کے عظیم قائد مسٹر کے چندرشیکھر رائو نے آصف جاہ سابع کی مزار پر حاضری دیتے ہوئے انہیں خراج پیش کیا تھا ۔ نائب وزیر اعلی تلنگانہ ریاست الحاج محمد محمو دعلی نے کہاکہ تلنگانہ کی موجودہ ترقی میںآصف جاہ صابع کے اصلاحات کااہم رول ہے ۔ انہوںنے آصف جاہی دور حکومت میں تعمیرکئے گئے آبی پراجکٹوں‘ تالاب اور جھیلوں کے علاوہ عالیشان عمارتوں کا بھی اس موقع پر ذکر کیا او رکہاکہ بادشاہی نظام میں سرکاری خرچ پر اپنی رعایا کو مفت طبی سہولتیں فراہم کرنے کی غرض سے بنیادی سہولتوں سے آراستہ دواخانوں کی تعمیر کرنے کا اعزاز صرف آصف جاہ سابع کو ہے۔ الحاج محمدمحمودعلی نے تلنگانہ ریاست میںآصف جاہی دور حکومت کی تہذیب وتمدن ‘ فرقہ وارانہ ہم آہنگی‘ امن اور بھائی چارہ کی بازیابی کویقینی قراردیا۔انہوں نے مزیدکہاکہ جس طرح آصف جاہی دور میںریاست حیدرآباد کے ہندو اور مسلمان بادشاہ وقت کی دوآنکھوں کی طرح تھے اسی طرح وزیراعلی تلنگانہ ریاست مسٹر کے چندرشیکھر رائو کے لئے بھی ریاست تلنگانہ کے ہندواور مسلمان دو آنکھوں کی طرح ہیں۔

TOPPOPULARRECENT