Friday , December 15 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ میں رئیل اسٹیٹ قیمتوں میں چند ماہ میں اضافہ ممکن

تلنگانہ میں رئیل اسٹیٹ قیمتوں میں چند ماہ میں اضافہ ممکن

حیدرآباد 23 اکٹوبر ( پی ٹی آئی ) تلنگانہ میں رئیل اسٹیٹ ڈیولپرس کی ایک تنظیم نے آج کہا کہ آئندہ چند مہینوں میں اقامتی اور تجارتی دونوں طرح کی جائیدادوں کی قیمتوں میں اضافہ ہوگا ۔ تنظیم کا کہنا ہے کہ نوٹ بندی کے اثرات ‘ جی ایس ٹی کے نفاذ اور RERA کی وجہ سے قیمتیں بڑھیں گی ۔ تلنگانہ رئیل اسٹیٹ ڈیولپرس اسوسی ایشن کے سکریٹری جنرل سنیل چندرا ریڈی نے کہا کہ آئندہ چند مہینوں میں ہمیں امید ہے کہ قیمتوں میں 400 تا 450 روپئے فی اسکوائر فیٹ کا اضافہ ہوگا یہ اضافہ نوٹ بندی ‘ RERA اور جی ایس ٹی کے نفاذ کی وجہ سے ہوگا ۔ مسٹر ریڈی نوٹ بندی ‘ رئیل اسٹیٹ ( ریگولیشن اینڈ ڈیولپمنٹ ) ایکٹ اور جی ایس ٹی کے اثرات سے متعلق سوال کا جواب دے رہے تھے ۔ انہوں نے کہا کہ حیدرآباد کی رائیل اسٹیٹ مارکٹ مستحکم ہے ۔ انہوں نے کہا کہ یہ ملک میں انتہائی قابل رسائی مارکٹوں میں سے ایک ہے جہاں تک رئیل اسٹیٹ کی قیمتوں کا سوال ہے ۔ انہوں نے کہا کہ چونکہ یہاں کئی انفرا اسٹرکچر پراجیکٹس کا منصوبہ ہے ایسے میں حیدرآباد ایک بہترین مارکٹ ہے ۔ یہ ایسی مارکٹ ہے جو آئندہ دو تا تین سال میں مزید ترقی کریگی ۔ انہوں نے کہا کہ ہم سمجھتے ہیں کہ یقینی طورپر قیمتوں میں اضافہ ہوگا کیونکہ تجارتی جائیدادوں کیلئے مانگ میںاضافہ ہوا ہے ۔ اس کے علاوہ اقامتی جائیدادوں کی قیمتوں میں بھی اضافہ ہوگا ۔

TOPPOPULARRECENT