Wednesday , September 19 2018
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ میں نکسلائیٹس سرگرمیاں ہر گز نہیں

تلنگانہ میں نکسلائیٹس سرگرمیاں ہر گز نہیں

ریاست میں امن و ضبط کی برقراری حکومت کی اولین ترجیح،وزیرداخلہ نرسمہا ریڈی کا بیان

ریاست میں امن و ضبط کی برقراری حکومت کی اولین ترجیح،وزیرداخلہ نرسمہا ریڈی کا بیان

حیدرآباد 5 جون (سیاست نیوز ) وزیر داخلہ ریاست تلنگانہ مسٹر این نرسمہا ریڈی نے کہا ہیکہ علاقہ تلنگانہ میں ممنوعہ انتہا پسند نکسلائیٹس ہر گز نہیں ہیں بلکہ تلنگانہ میں نکسلائیٹس کی موجودگی سے متعلق اطلاعات کو صرف اور صرف میڈیا کی اختراع ہے انہوں نے کہا کہ تلنگانہ ریاست میں امن و ضبط کی برقراری اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی کو مستحکم بنانا ہی تلنگانہ راشٹرا سمیتی کی زیر قیادت تلنگانہ ریاست حکومت کی اولین ترجیح ہوگی علاوہ ازیں تلنگانہ حکومت محکمہ پولیس میں بعض ضروری تبدیلیوں و ردو بدل کی ممکنہ کوشش کرے گی ۔2 جون کو تلنگانہ ریاست کے پہلے وزیر داخلہ کی حیثیت سے حلف لینے والے مسٹر این نرسمہا ریڈی نے آج صبح سکریٹریٹ میں انہیں الاٹ کردہ چیمبر میں اپنی وزارتی ذمہ داری کا جائزہ حاصل کیا اور بعدازاں اخباری نمائندوں سے غیر رسمی بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ خواتین کو تحفظ فراہم کرنا اور عوام کی جان و مال کی حفاظت کو یقینی بنانا حکومت کی اولین ترجیح ہوگی ۔ وزیر داخلہ کی جانب سے وزارتی ذمہ داری کا جائزہ لینے کے موقع پر ملازمین و عہدیداران پولیس کے علاوہ سکریٹریٹ ملازمین نے ان کا شاندار خیرمقدم کیا اور کئی وزراء و اعلی عہدیداران پولیس نے مسٹر این نرسمہا ریڈی سے ملاقات کر کے انہیں مبارکباد پیش کی ۔ انہوں نے (وزیر داخلہ نے ) پر زور الفاظ میں کہا کہ بہت جلد تلنگانہ عوام کرپشن سے پاک پولیس نظام کو دیکھ پائیں گے ۔ کیونکہ ان کی حکومت کرپشن کی ہر گز ہمت افزائی نہیں کرے گی بلکہ کرپشن کا انسداد کرنے کیلئے بڑے پیمانے پر اقدامات کرے گی علاوہ ازیں امن کی برقراری ،فرقہ اورانہ ہم آہنگی کا استحکام کو یقینی بنایا جائے گا۔

وزیر داخلہ نے مزید کہا کہ مختلف اہمیت کے حامل کیسس کی جامع تحقیقات کیلئے سی بی سی آئی ڈی کو وسیع پیمانے پر مستحکم بنایا جائے گا ۔ وزیر داخلہ نے کہا کہ تلنگانہ میں پولیس نظام کو عصری سہولتوں سے آراستہ کرنے کیلئے موثر اقدامات کئے جائیں گے ۔ ٹریفک پولیس کو میڈیکل الاونس کی فراہمی کو روبہ عمل لانے کے ساتھ ساتھ ان کی بہبودی کیلئے بھی ممکنہ کوشش کی جائے گی ۔ علاوہ ازیں تاریخی شہر حیدرآباد میں سکیوریٹی انتظامات میں مزید بہتری پیدا کی جائے گی اور جرائم کے واقعات کا تدارک کرنے بڑے پیمانے پر اقدامات کئے جائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ جگہ جگہ شہر حیدرآباد میں سی سی (سرویلنس) کیمرے نصب کئے جائیں گے اور امن و ضبط کی صورتحال کا جب کا تب جائزہ لینے جیسے اقدامات میں تیزی پیدا کی جائے گی ۔ انہوں نے خواتین کا تذکرہ کریت ہوئے کہا کہ ہر کوئی خاتون کسی ڈر و خوف کے بعیر پولیس اسٹیشن پہنچ کر اپنی شکایت کرنے کیلئے ساز گار ماحول فراہم کرنے کے اقدامات کئے جائیں گے ۔

TOPPOPULARRECENT