Wednesday , January 17 2018
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ میں نکسل ازم بڑھنے کے اندیشے مسترد

تلنگانہ میں نکسل ازم بڑھنے کے اندیشے مسترد

حیدرآباد 20 جنوری ( پی ٹی آئی ) سبکدوشی اختیار کرچکے سابق نکسلائیٹ جی وی کے پرساد عرف گڈسا یوسینڈی نے ان اطلاعت کو مسترد کردیا کہ علیحدہ ریاست تلنگانہ کی تشکیل کے نتیجہ میں علاقہ میں بائیں بازو کی تخریب کاری میں اضافہ ہوگا ۔ انہوں نے کہا کہا تقسیم ریاست کے مخالفین عمدا اسطرح کی اطلاعات پھیلا رہے ہیں۔ ماؤیسٹ تحریک کے ڈنڈا کرنیا اسپیشل

حیدرآباد 20 جنوری ( پی ٹی آئی ) سبکدوشی اختیار کرچکے سابق نکسلائیٹ جی وی کے پرساد عرف گڈسا یوسینڈی نے ان اطلاعت کو مسترد کردیا کہ علیحدہ ریاست تلنگانہ کی تشکیل کے نتیجہ میں علاقہ میں بائیں بازو کی تخریب کاری میں اضافہ ہوگا ۔ انہوں نے کہا کہا تقسیم ریاست کے مخالفین عمدا اسطرح کی اطلاعات پھیلا رہے ہیں۔ ماؤیسٹ تحریک کے ڈنڈا کرنیا اسپیشل زونل کمیٹی کے سابقہ ترجمان جی وی کے پراسد نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ علیحدہ ریاست کی تشکیل کے بعد علاقہ تلنگانہ میں ماؤیسٹ تحریک میں اضافہ کا خیال درست نہیں ہے ۔ انہوں نے کہا کہ جو عناصر تلنگانہ ریاست کی تشکیل کے مخالف ہیں وہ اس طرح کا منفی ماحول پیدا کر رہے ہیں۔ یوسینڈی نے اپنی شریک حیات اور ایک ڈویژنل کمیٹی کی رکن سنتوشی مرکم کے ساتھ 7 جنوری کو ہتھیار ڈال دئے تھے ۔

انہوں نے کہا کہ انہوں نے نظریاتی اختلافات کے نتیجہ میں نکسل تحریک سے سبکدوشی اختیار کرلی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ انہیں سی پی آئی ماؤیسٹ کے خیالات سے اختلاف تھا اور ان کی صحت بھی متاثر تھی ۔ گذشتہ سال چھتیس گڑھ میں ڈربھا وادی میں کانگریس قائدین پر ہوئے نکسلائیٹس حملہ کے تعلق سے انہوں نے کہا کہ وہ اس حملہ کے منصوبی بندی یا اس پر عمل آوری کے عمل میں شامل نہیں تھے ۔ انہوں نے جو کھچ کیا ہے وہ صرف اتنا تھا کہ اس حملہ کی اطلاع پریس نوٹس کے ذریعہ دی تھی ۔ انہوں نے کہا کہ ان کے ساتھ اس حملہ کی منصوبہ بندی یا عمل آوری کے تعلق سے کوئی تبادلہ خیال نہیں کیا تھا اور اس حملہ سے ان کا کوئی راست تعلق نہیں تھا ۔ اس سوال پر کہ آیا وہ ان ہلاکتوںکی تائید کرتے ہیں انہوں نے کہا کہ جب وہ ماؤیسٹوں کے ساتھ تھے پارٹی کی مدافعت کرنا ان کی ذمہ داری تھی اور اب جبکہ وہ اس سے علیحدہ ہوگئے ہیں ایسے میں وہ حالات کو قدرے مختلف نظر و انداز سے دیکھتے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT