Monday , December 11 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ میں 1951 کیلو میٹر قومی شاہراہوں کی عنقریب منظوری

تلنگانہ میں 1951 کیلو میٹر قومی شاہراہوں کی عنقریب منظوری

مرکزی وزیر نتن گڈکری کوجامع پراجکٹ رپورٹ پیش، ریاستی وزیر ناگیشور راؤ کا بیان
حیدرآباد۔/10اگسٹ، ( سیاست نیوز) ریاست تلنگانہ میں 1951 کیلو میٹر طویل قومی شاہراہوں سے متعلق منظوریاں ماہ ڈسمبر تک دے دی جائیں گی۔ مرکزی وزیر مسٹر نتن گڈکری نے آج ان سے ملاقات کرنے والے وزیر عمارات و شوارع ریاست تلنگانہ مسٹر ٹی ناگیشور راؤ کو اس بات کا واضح تیقن دیا۔ بعد ازاں وزیر عمارات و شوارع مسٹر ٹی ناگیشور راؤ نے اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے بتایا کہ مذکورہ قومی شاہراہوں سے متعلق جامع پراجکٹ رپورٹ حکومت تلنگانہ کی جانب سے مرکزی حکومت بشمول مسٹر نتن گڈکری کے حوالہ کی گئی۔ انہوں نے کہا کہ ریاست تلنگانہ میں شاہراہوں کی توسیع کے سلسلہ میں مرکزی وزیر مسٹر نتن گڈکری کے ساتھ دہلی میں منعقدہ ایک اجلاس میں تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔ مسٹر ناگیشور راؤ نے بتایا کہ مسٹر نتن گڈکری سے بات چیت کے دوران ہی مرکزی وزیر نے کہا کہ ریاست تلنگانہ کو 400 کروڑ روپئے سی آر ایف فنڈز فراہم کئے جائیں گے۔

علاوہ ازیں ریاست تلنگانہ کو واجب الادا سابق بقایا جات 1350 کروڑ روپئے کے ساتھ ساتھ سنگاریڈی، شمس آباد، ایر پورٹ شاہراہ کی ترقی کلئے مرکز سے مناسب رقومات ( فنڈز ) فراہم کرنے کی مرکزی حکومت بالخصوص مرکزی وزیر مسٹر نتن گڈکری سے خواہش کی گئی۔ وزیر موصوف نے کہا کہ مرکزی وزیر مسٹر نتن گڈکری نے ریاست تلنگانہ کے پیش کردہ مختلف مسائل پر اپنے مثبت رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے عاجلانہ یکسوئی کرنے کا واضح تیقن دیا۔ انہوں نے بتایا کہ آج دہلی میں مرکزی وزیر دیہی ترقیات و پنچایت راج مسٹر نریندر سنگھ تومر سے ملاقات کی گئی اور ریاست تلنگانہ کے دیہی علاقوں میں شاہراہوں کی تعمیرکیلئے فنڈز فراہم کرنے کی پرزور اپیل کی اور بتایا کہ کھمم، ورنگل، کریم نگر، عادل آباد اضلاع میں سڑکوں کی ترقی کیلئے ہر ممکنہ مدد کرنے کی مرکزی وزیر دیہی ترقیات و پنچایت راج سے خواہش کی گئی۔ مسٹر ٹی ناگیشور راؤ نے بتایا کہ چونکہ اضلاع کھمم، ورنگل، کریم نگر، عادل آباد ایک سیکٹر کے طور پر پائے جاتے ہیں اور ان اضلاع میں پائے جانے والے دیہی علاقوں میں ٹرانسپورٹ کی سہولتیں مناسب انداز میں نہیں پائے جاتے۔ لہذا ان علاقوں میں سڑکوں کی عاجلانہ تعمیر بہت ضروری ہے۔ وزیر عمارات و شوارع نے مزید بتایا کہ مرکزی وزیر نے اس سلسلہ میں ممکنہ مدد فراہم کرنے کا تیقن دیا۔

TOPPOPULARRECENT