Monday , November 20 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ و اے پی میں آئندہ دو یوم شدید بارش

تلنگانہ و اے پی میں آئندہ دو یوم شدید بارش

بعض اضلاع میں مانسون کمزور۔ محکمہ موسمیات کی پیش قیاسی
حیدرآباد۔16اگسٹ (سیاست نیوز) ریاست تلنگانہ و آندھرا پردیش کے اضلاع میں آئندہ دو یوم کے دوران شدید بارش کی پیش قیاسی کی گئی ہے اور محکمہ موسمیات کی جانب سے جاری کردہ بلیٹن میں بتایا گیا ہے کہ دونوں ریاستوں بالخصوص ریاست آندھرا پردیش کے ساحلی اضلاع میں شدید بارش کا امکان ہے ۔ محکمہ موسمیات نے دونوں ریاستوں کے مختلف اضلاع میں بارش کی پیش قیاسی کرتے ہوئے کہا کہ ریاست تلنگانہ کے چند اضلاع میں مانسون کمزور ہوگا لیکن اس کے باوجود بھی بارش کے امکانات مسترد نہیں کئے جا سکتے اور نہ ہی درجہ حرارت میں کوئی ایسی تبدیلی ریکارڈ کی جائے گی جو معمول کے مطابق نہ ہو۔ خلیج بنگال میں ہوا کے دباؤ میں آنے والی کمی کے سبب دونوں ریاستوں میں شدید بارش کے امکانات ظاہر کئے جارہے ہیں اور محکمہ موسمیات کے بلیٹن کے مطابق خلیج بنگال میں ہوا کے دباؤ میں آنے والی کمی کے اثرات اس مرتبہ آسام‘ اڈیشہ‘ آندھرا پردیش اور تلنگانہ کے علاوہ کرناٹک کے بعض اضلاع میں بھی محسوس کئے جائیں گے۔ بتایاجاتاہے کہ بادل آندھرا پردیش و تلنگانہ سے کرناٹک کی سمت رواں ہوں گے جس کے سبب کرناٹک کے بھی بیشتر علاقوں میں بارش ریکارڈ کی جائے گی۔ ریاست تلنگانہ کے اضلاع عاد ل آباد‘ نظام آباد کاماریڈی ‘ حیدرآباد ‘ رنگاریڈی ‘ میڑچل اور ملکا جگری و غیرہ کے علاقوں میں 17تا 19اگسٹ ہلکی اور تیز بارش ریکارڈ کئے جانے کا امکان ہے ۔ محکمہ موسمیات کے اعلامیہ کے مطابق میدک‘ ظہیرآباد اور حیدرآباد کے علاقوں میں 16اگسٹ سے ہی ہلکی اور تیز بارشوں کا سلسلہ شروع ہوجائے گا۔محکمہ موسمیات کی جانب سے جاری کردہ بلیٹن کے بعد ریاستی حکومتوں بالخصوص حکومت تلنگانہ اور حکومت آندھرا پردیش کی جانب سے احتیاطی اقدامات کی ہدایات جاری کردی گئی ہیں اور کہا جا رہا ہے کہ ریاست تلنگانہ میں موسلا دھاربارش کی صورت میں نقصانات کو کم کرنے کی کوشش کی جائے گی ۔ محکمہ زراعت کے عہدیداروں کا کہنا ہے کہ مانسون کی بارش معمول کے مطابق ہو تو فصلوں کو نقصان کا خدشہ نہیں ہے لیکن اگر موسلادھار شدید بارش کے علاوہ طوفان جیسی صورتحال پیدا ہوتی ہے تو ایسی صورت میں کھڑی فصلیں تباہ ہو سکتی ہیں ۔ محکمہ موسمیات کے مطابق آئندہ 48 گھنٹوں کے دوران دونوں ریاستوں کے بیشتر اضلاع میں بارش کا سلسلہ جاری رہے گا اور 19اگسٹ کے بعد ہی خلیج بنگال میں ہوا کے دباؤ میں کمی ہونے کا امکان ہے۔

TOPPOPULARRECENT