Sunday , September 23 2018
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی عوام کی امیدوں کو پورا کرنے میں ناکام

تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی عوام کی امیدوں کو پورا کرنے میں ناکام

صدر پی سی سی کو ہٹانے کی وجہ بھی یہی ہے ، مدھوگوڑیشکی کا ادعا

صدر پی سی سی کو ہٹانے کی وجہ بھی یہی ہے ، مدھوگوڑیشکی کا ادعا
حیدرآباد ۔ یکم مارچ : ( سیاست نیوز ) : کانگریس کے سابق رکن پارلیمنٹ مسٹر مدھوگوڑ یشکی نے کہا کہ تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی عوام کی امیدوں کو پورا کرنے میں ناکام ہوگئی تھی۔ اس لیے پنالہ لکشمیا کو صدارت سے ہٹادیا گیا ۔ آج یہاں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے مسٹر مدھوگوڑ یشکی نے کہا کہ تلنگانہ میں کانگریس پارٹی اپوزیشن میں ہے ۔ حکومت کی ناکامیوں کو منظر عام پر لانے اور عوامی مسائل کو موثر انداز میں اٹھانے کے معاملے میں تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی ناکام ہوگئی ہے جس کی وجہ سے کانگریس ہائی کمان نے پنالہ لکشمیا کو تلنگانہ پردیش کانگریس کی صدارت سے ہٹادیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ٹی آر ایس نے اپنے انتخابی منشور کے ذریعہ عوام سے جو وعدے کئے ہیں ۔ اس کو تشکیل حکومت کے 10 ماہ بعد بھی کسی ایک وعدے کو پورا کرنے میں کامیاب نہیں ہوئے ۔ ایسی حکومت کو اقتدار پر برقرار رہنے کا اخلاقی حق نہیں ہے ۔ صدر کانگریس مسز سونیا گاندھی نے علحدہ تلنگانہ ریاست تشکیل دیا ہے اس کی بہتر تشہیر کرنے میں کانگریس قائدین ناکام ہوئے ہیں ۔ جھوٹے وعدے کرتے ہوئے اقتدار حاصل کرنے والی ٹی آر ایس حکومت کی اصلیت کو منظر عام پر لانے میں کانگریس پارٹی اپوزیشن کا صحیح طریقے سے رول نہیں نبھایا ہے ۔ جس کی وجہ سے کانگریس ہائی کمان ناراض ہے ۔ ٹی آر ایس حکومت نے 10 ماہ کے لیے ایک لاکھ کروڑ روپئے کا بجٹ منظور کیا ہے ۔ اس میں 35 فیصد بجٹ بھی خرچ نہیں کیا ہے ۔ کسانوں کے قرض معاف نہیں ہوئے ۔ دلت طبقات کو فی کس 3 ایکڑ اراضی ابھی تک نہیں ملی ۔ 2 بیڈ روم کے فلیٹ کا وعدہ پورا نہیں ہوا ۔ مسلمانوں اور قبائیلی طبقات کو 12 فیصد تحفظات نہیں ملے ۔ وظیفوں کی اجرائی میں کئی مستحق اور اہل ارکان محروم ہورہے ہیں ۔ وعدوں کی عمل آوری میں ٹی آر ایس حکومت ناکام ہوگئی ہے ۔ چیف منسٹر تلنگانہ کارکردگی کی بنیاد پر عوام میں اپنا مقام بنانے کے بجائے توہم پرستی کا شکار ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT