Saturday , December 16 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ کابینہ کا 19 ستمبر کو اجلاس

تلنگانہ کابینہ کا 19 ستمبر کو اجلاس

اسمبلی میں اپوزیشن کے حملوں کا سامنا کرنے حکمت عملی کی تیاری
حیدرآباد۔/17ستمبر، ( سیاست نیوز)  تلنگانہ کابینہ کا اجلاس 19ستمبر کو طلب کیا گیا ہے۔ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ کی قیادت میں 2بجے دن کابینہ اجلاس شروع ہوگا جس میں اسمبلی کے مجوزہ اجلاس کے ایجنڈہ کے علاوہ اپوزیشن کے حملوں کا سامنا کرنے کیلئے حکمت عملی طئے کی جائے گی۔ توقع ہے کہ چیف منسٹر اپنے دورہ چین کی تفصیلات سے کابینی رفقاء کو واقف کروائیں گے۔ ریاست میں کسانوں کی خودکشی کے واقعات اور دیگر اُمور پر بھی تبادلہ خیال کا امکان ہے۔ چین کے 10روزہ دورہ کے بعد چندر شیکھر راؤ کل رات ہی حیدرآباد واپس ہوئے۔ اسی دوران سرکاری ذرائع نے عیدالاضحی اورگنیش تہوار کے سبب اسمبلی اجلاس کے شیڈول میں تبدیلی سے متعلق اطلاعات کو مسترد کردیا۔ ذرائع نے بتایا کہ اسمبلی کا مانسون سیشن مقررہ پروگرام کے مطابق 23ستمبر سے شروع ہوگا اور 24ستمبر کو بھی اجلاس منعقد ہوگا جبکہ 25، 26اور27ستمبر کو اسمبلی کو تعطیلات دی جائیں گی۔ 28ستمبر سے دوبارہ اجلاس کا آغاز ہوگا اور توقع ہے کہ پانچ دن تک اجلاس جاری رہے گا۔ تلنگانہ اسمبلی کا مانسون سیشن ہنگامی نوعیت کا ہوسکتا ہے کیونکہ اپوزیشن جماعتوں نے کسانوں کی خودکشی اور دیگر واقعات پر حکومت کو گھیرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ کانگریس اور تلگودیشم فلورکوآرڈینیشن کے ذریعہ اسمبلی میں حکومت کے خلاف متحدہ حملہ کی حکمت عملی تیار کررہے ہیں۔ کسانوں کی خودکشی کے واقعات میں اضافہ کو اہم موضوع بنایا جاسکتا ہے۔ اس کے علاوہ چیف منسٹر کے دورہ چین کی کامیابیوں کے بارے میں بھی سوالات کئے جائیں گے۔ ریاست کی ابتر معاشی صورتحال اور ورلڈ بینک کی جانب سے جاری کردہ حالیہ رپورٹ پر بھی حکومت کو نشانہ بنانے کی تیاری کی جارہی ہے۔ اپوزیشن جماعتیں بعض وزراء کی سرگرمیوں کے خلاف بھی اسمبلی میں حکومت کو گھیرنے کی کوشش کریں گی اور خاص طور پر وزیر کمرشیل ٹیکسیس سرینواس یادو کی کابینہ میں برقراری کو اپوزیشن بحث کا موضوع بناسکتا ہے۔

TOPPOPULARRECENT