Tuesday , December 12 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ کا رئیل اسٹیٹ شعبہ جی ایس ٹی کے دائرہ کار میں

تلنگانہ کا رئیل اسٹیٹ شعبہ جی ایس ٹی کے دائرہ کار میں

محکمہ کمرشیل و مال سے مشاورت کے لیے آج اجلاس ، حکومت کا فیصلہ اہمیت کا حامل
حیدرآباد۔19اکٹوبر (سیاست نیوز) رئیل اسٹیٹ شعبہ کو جی ایس ٹی کے دائرہ کار میں شامل کئے جانے کے اثرات کا جائزہ لینے کا عمل تلنگانہ میں شروع کردیا گیا ہے اور اس سلسلہ میں ابتدائی مشاورت شروع کر دی گئی ہے۔ حکومت تلنگانہ کے محکمہ کمرشیل ٹیکس اور محکمہ مال کے عہدیداروں نے اس سلسلہ میں مشاورت کرتے ہوئے 20 اکٹوبر کو محکمہ مال‘ کمرشیل ٹیکس‘ فینانس ‘ اسٹامپس اینڈ رجسٹریشن کے عہدیداروں کا اجلاس طلب کرتے ہوئے جی ایس ٹی میں رئیل اسٹیٹ کی شمولیت کے سلسلہ میں اقدامات کاجائیزہ لیا جائے گا۔ مسٹر سومیش کمار آئی اے ایس پرنسپل سیکریٹری کمرشیل ٹیکس نے اس سلسلہ میں اسپیشل چیف سیکریٹری حکومت تلنگانہ برائے مال مسٹر بی آر مینا سے ملاقات کرتے ہوئے تبادلہ خیال کیا۔ ریاستی حکومت کی جانب سے مرکزی حکومت کی تجویز کی مخالفت یا تائید کے سلسلہ میں تاحال کوئی قطعی فیصلہ نہیں کیا گیا ہے جبکہ ملک کی 5ریاستوں کے علاوہ دہلی حکومت نے رئیل اسٹیٹ شعبہ کو جی ایس ٹی کے دائرہ کار میں لانے کی تائید کردی ہے اور حکومت تلنگانہ اس بات کا فیصلہ کرنے سے قاصر ہے کہ اس مسئلہ میں حکومت کی تائید کی جائے یا رئیل اسٹیٹ شعبہ کو جی ایس ٹی سے باہر رکھنے کی حمایت کی جائے۔ ریاستی حکومت کی جانب سے اس بات کا جائزہ لیاجا رہاہے کہ ریاست میں رئیل اسٹیٹ شعبہ کو جی ایس ٹی کے دائرہ کار میں شامل کیا جاتا ہے تو اس کے ریاستی حکومت کی آمدنی پر کیا منفی اثرات مرتب ہوں گے ؟ بتایاجاتاہے کہ ریاستی حکومت کے عہدیداروں کا کہنا ہے کہ حکومت ہند کی جانب سے رئیل اسٹیٹ میں کالے دھن کی سرمایہ کاری کو روکنے کیلئے جی ایس ٹی کے دائرہ میں لانے کی جو بات کی جا رہی ہے اس کے نتائج ریاست کی آمدنی پر منفی ہو سکتے ہیں لیکن اس کے باوجود اس کے فائدوں کا جائزہ لیا جا رہاہے۔ حکومت تلنگانہ کی جانب سے جی ایس ٹی کے متعلق اختیار کردہ موقف انتہائی اہمیت کا حامل ہے کیونکہ اب تک جی ایس ٹی کے سلسلہ میں منعقد ہونے والے جی ایس ٹی کونسل کے اجلاس میں ریاستی حکومت کی تجاویز کو کافی اہمیت حاصل ہوئی ہے اور رئیل اسٹیٹ شعبہ کو جی ایس ٹی کے دائرہ کار میں شامل کئے جانے کے سلسلہ میں بھی حکومت تلنگانہ کی تجاویز اہمیت کی حامل ہوں گی اسی لئے ریاستی حکومت کے متعلقہ محکمہ جات کے عہدیداروں کے ہمراہ اجلاس کے انعقاد اور مشاور ت کے بعد جو نتائج برآمد ہوں گے ان تجاویز کو مدنظر رکھتے ہوئے ریاستی حکومت ریاست کے مفادات کے تحفظ کیلئے 9نومبر کو منعقد ہونے والے جی ایس ٹی کونسل کے اجلاس میں اپنی رائے پیش کرے گی ۔

TOPPOPULARRECENT