Thursday , October 18 2018
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ کو گرین پاور جنریشن والی ریاست میں تبدیل کرنے پر غور

تلنگانہ کو گرین پاور جنریشن والی ریاست میں تبدیل کرنے پر غور

پائپ لائن سے برقی پیدا ، سائنسدان سرینواس بھاسکر چاگنٹی
حیدرآباد۔13اپریل(سیاست نیوز) حکومت تلنگانہ ریاست میں پائپ لائن میں برقی پیداوار کے منصوبہ کو فروغ دیتے ہوئے ریاست کو گرین پاؤر جنریشن والی ریاست میں تبدیل کرنے میں تعاون کرے۔ شہر حیدرآباد سے تعلق رکھنے والے سائنسداں مسٹر سرینیواس بھاسکر چاگنٹی نے بتایا کہ ’’اِن پائپ پاؤر جنریشن‘‘ ان کی اپنی ایجاد ہے اور وہ 1996میں اس منصوبہ کو پیش کرچکے ہیں لیکن اس وقت کی حکومتوں نے اس منصوبہ کو اہمیت نہیں دی۔ مسٹر سرینواس بھاسکر نے بتایا کہ NASA میں سیلینڈریکل پائپ کے ذریعہ برقی پیدا کی جاتی ہے جب کہ انہوں نے پائپ لائن کے اندر برقی پیداوار کا کامیاب تجربہ کیا ہے۔ انہوںنے بتایا کہ حکومت کی جانب سے اس منصوبہ پر عمل آوری کو یقینی بنایا جاتا ہے تو ایسی صورت میں کم خرچ پر بجلی پیداوار ممکن بنائی جا سکتی ہے لیکن حکومت کو اس منصوبہ پر عمل آوری کرنے کیلئے حکمت عملی تیار کرنی ہوگی اور قدیم طریقہ کار کو ترک کرنا ہوگا۔ مسٹر سرینواس بھاسکر نے بتایا کہ ریاست تلنگانہ میں شمسی توانائی اور دیگر طریقہ پیداوار کو فروغ دیا جا رہا ہے لیکن اس طریقہ کار کو نظر انداز کیا جا رہا ہے جبکہ اِن پائپ پاؤر جنریشن کے ذریعہ برقی پیداوار کی صورت میں فی یونٹ 5تا10 پیسہ میں پیداوار ممکن ہو سکتی ہے۔اس ایجاد کے موجد ہونے کا دعوی کرنے والے سائنسداں کا کہناہے کہ یہ بات ثابت ہوچکی ہے کہ اِن پائپ پاؤر جنریشن NASA کی جانب سے استعمال کی جانے والی ٹیکنالوجی سے کافی حد تک بہتر ہے اور اس کے اخراجات بھی کافی کم ہیں۔

TOPPOPULARRECENT