Saturday , November 18 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ کی 1300 کلومیٹر سڑکیں محکمہ عمارات و شوارع کے حوالہ

تلنگانہ کی 1300 کلومیٹر سڑکیں محکمہ عمارات و شوارع کے حوالہ

ٹریفک کی آمد و رفت کو آسان بنانے کیلئے حکومت کے اقدامات‘بڑے پیمانے پر سڑکوں کی تعمیر کا فیصلہ
حیدرآباد۔15فبروری ( سیاست نیوز) تلنگانہ حکومت نے ایمسیٹ میں محکمہ پنچایت راج کے تحت پائی جانے والی 1300کلومیٹر طویل فاصلہ پر مبنی سڑکوں کو محکمہ عمارات و شوارع ( آر اینڈ بی) کے حوالہ کرنے کے اقدامات کررہی ہے ۔ بالخصوص ان سڑکوں پر بڑھتی ہوئی ٹریفک کے پیش نظر عوامی منتخبہ نمائندوں بشمول ارکان پارلیمان و اسمبلی کی موثر نمائندگیوں کا جائزہ لیتے ہوئے حکومت نے ان سڑکوں کو محکمہ پنچایت راج سے نکال کر محکمہ عمارات و شوارع کے حوالہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ باوثوق سرکاری ذرائع نے یہ بات کہی اور بتایا کہ سابق میں حکومتوں نے پنچایت راج محکمہ کی سڑکوں کو کم اور محکمہ عمارات و شوارع کی سڑکوں کیلئے زیادہ رقومات فراہم کی جاتی ہیں جس کے نتیجہ میں کئی ارکان اسمبلی وغیرہ نے اپنے حلقہ جات اسمبلی میں محکمہ پنچایت راج کی پائی جانے والی سڑکوں کو محکمہ عمارات و شوارع کے حوالہ کرنے کیلئے حکومت پر دباؤ ڈالا تھا ۔ بتایا جاتا ہیکہ ریاست تلنگانہ میں مسٹر کے چندر شیکھر راؤ کی زیرقیادت حکومت تشکیل پانے کے بعد محکمہ پنچایت راج کی سڑکوں کو محکمہ عمارات و شوارع کے حوالہ کرنے حکومت پر پڑنے والے دباؤ میں کمی واقع ہوئی ہے کیونکہ چیف منسٹر مسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے سب سے پہلے پنچایت راج محکمہ کی سڑکوں کیلئے ہی زیادہ سے زیادہ رقومات فراہم کئے جانے کی وجہ سے کاموں میں بھی کافی حد تک تیزی پیدا ہوئی ہے ۔ بتایا جاتا ہیکہ پنچایت راج کے تحت کی  سڑکوں کیلئے کم از کم 30تا 40 لاکھ روپئے درکار ہوتے ہیں جبکہ محکمہ عمارات و شوارع کے تحت کی سڑکوں کیلئے 40لاکھ روپئے کے مصارف عائد ہوتے ہیں ۔ بتایا جاتا ہیکہ محکمہ پنچایت راج کی سڑکوں کو محکمہ آر اینڈ بی ( عمارات و شوارع) کے حوالہ کرنے کے معاملہ میں ضلع پریشد کے اجلاس عام میں باقاعدہ طور پر قرارداد کی منظوری ناگزیر ہے اور محکمہ پنچایت  راج کے عہدیداروں کی رضامندی بھی حاصل کرنا پڑتا ہے ۔ اسی ذرائع کے مطابق بتایا جاتا ہیکہ ریاست میں اب تک ہی 205 کلومیٹر فاصلہ کی سڑـوں کی محکمہ عمارات و شوارع کو حوالگی عمل میں آچکی ہے اور اس سلسلہ میں احکامات بھی جاری کئے جاچکے ہیں ۔

TOPPOPULARRECENT