Tuesday , November 21 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ کے آبپاشی پراجکٹس کی تعمیر آندھرائی گتہ داروں کے سپرد

تلنگانہ کے آبپاشی پراجکٹس کی تعمیر آندھرائی گتہ داروں کے سپرد

نئی ریاست کے ساتھ ناانصافی ، کل جماعتی گول میز کانفرنس، کودنڈا رام و دیگر کا خطاب
حیدرآباد۔10جولائی(سیاست نیو ز) علیحدہ تلنگانہ تحریک کا مقصد علاقے سے آندھرائی حکمرانوں اور سرمایہ داروں کی اجارہ داری کو ختم کرتے ہوئے تلنگانہ کے ساتھ انصاف کو یقینی بنانا اور علاقہ تلنگانہ کو درپیش آبرسانی اور برقی مسائل کو ختم کرنا تھا مگر تلنگانہ ریاست کی تشکیل کے بعد ریاست میںبرسراقتدار آنے والی سیاسی جماعت تلنگانہ راشٹریہ سمیتی نے تلنگانہ تحریک کے مقاصد کو فراموش کرتے ہوئے تلنگانہ کے زیر التواء آبپاشی پراجکٹس کے قد وخال میںتبدیلیاں لاتے ہوئے مذکورہ پراجکٹس کے دوبارہ تعمیر کے لئے آندھرائی گتہ داروں کو مواقع فراہم کررہی ہے ۔آج یہاں سوماجی گوڑہ پریس کلب میں جلہ سادھنا سمیتی کے زیر اہتمام پالمور آبپاشی پراجکٹس کو جی او نمبر69کے تحت تعمیرکرانے کا مطالبہ کرتے ہوئے منعقدہ کل جماعتی گول میز کانفرنس سے خطاب کے دوران مختلف قائدین نے ان خیالات کا اظہار کیا۔جسٹس چندرا کمار کی قیادت میں منعقدہ اس گول میز کانفرنس میںسابق مرکزی وزیر جئے پال ریڈی‘
چیرمن تلنگانہ جوائنٹ ایکشن کمیٹی پروفیسر کودنڈارام ‘ بی جے پی قائد وسابق ریاستی وزیرناگم جناردھن ریڈی‘سابق ریاستی وزیر ڈی کے ارونا‘ ترجمان تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی ڈاکٹر شراون کمار‘اسٹیٹ جنرل سکریٹری سی پی ائی ایم تمنینی ویرا بھدرم ‘ پرشتم ریڈی کے علاوہ مختلف رضاکارانہ تنظیموں کے قائدین نے شرکت کرتے ہوئے پالمور آبپاشی پراجکٹ کے متعلق حکومت تلنگانہ کے رویہ کو اپنی شدید تنقید کا نشانہ بنایا۔ مذکورہ قائدین نے دوران خطاب چیف منسٹر کے چندرشیکھر رائو کو اپنی کڑی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ تلنگانہ تحریک کے دوران کرن کمار ریڈی پر آندھرائی کنٹراکٹرس کو فائدہ پہنچانے کا الزام عائد کرنے والے کے سی آر آج خود پالمور پراجکٹ کے ذریعہ آندھرائی گتہ داروںکو فائدہ پہنچانے کا کام کررہے ہیں۔ پالمور پراجکٹ کے متعلق حکومت تلنگانہ کے رویہ کے خلاف کل جماعتی ریالی اور متاثرہ علاقوں کا دورہ کرنے کا بھی اس موقع پر منصوبہ تیار کیاگیا۔

TOPPOPULARRECENT