Thursday , November 23 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ کے ساتھ مکمل انصاف کرنے مرکز سے نمائندگی

تلنگانہ کے ساتھ مکمل انصاف کرنے مرکز سے نمائندگی

رقومات کی فراہمی میں بھی کوتاہی نہ کرنے ارون جیٹلی سے ریاستی وزیر فینانس کا مطالبہ
حیدرآباد ۔ 6 ۔ فروری : ( سیاست نیوز ) : ریاست تلنگانہ کے ساتھ مکمل انصاف کرنے اور زیادہ سے زیادہ رقومات نو تشکیل دی گئی ریاست تلنگانہ کو فراہم کرنے کا مرکزی وزیر فینانس مسٹر ارون جیٹلی سے وزیر فینانس تلنگانہ مسٹر ای راجندر نے پر زور مطالبہ کیا ۔ باوثوق سرکاری ذرائع نے یہ بات کہی اور بتایا کہ ریاستوں کے وزرائے فینانس کے ساتھ مرکزی وزیر فینانس مسٹر ارون جیٹلی نے آج دہلی میں ملاقات کی تھی ۔ اور اس ملاقات کے دوران مسٹر ای راجندر وزیر فینانس ریاست تلنگانہ نے مرکزی وزیر فینانس سے تفصیلی تبادلہ خیال کیا اور رقومات فراہم کرنے کا مطالبہ کیا ۔ مرکزی فینانس مسٹر ارون جیٹلی سے ملاقات کے فوری بعد اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے وزیر فینانس مسٹر ای راجندر نے بتایا کہ ریاست کو واجب الادا سی ایس ٹی بقایا جات کی فی الفور ادائیگی کو یقینی بنانے کا مرکزی وزیر فینانس سے مطالبہ کیا گیا اور ایف آر بی ایم اسکیم کو 3.5 فیصد تک اضافہ کرنے کی پر زور اپیل کی گئی ۔ علاوہ ازیں ایچ ایم ڈی اے (حیدرآباد میٹرو ڈیولپمنٹ اتھاریٹی ) حدود میں آئی ٹی ( انفارمیشن ٹکنالوجی ) شعبہ کو ٹیکس سے استثنیٰ دینے کا بھی مطالبہ کیا گیا ۔ وزیر فینانس ریاست تلنگانہ مسٹر ای راجندر نے ریاست تلنگانہ کے ساتھ مرکزی حکومت کی جانب سے کی جانے والی نا انصافیوں کا تذکرہ کرتے ہوئے مرکزی حکومت کو سخت تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ ریاست تلنگانہ کو مرکزی حکومت کسی بھی نوعیت کی ترغیبات و رقومات فراہم نہیں کررہی ہے ۔ اور کہا کہ مرکز میں مسٹر نریندر مودی کی زیر قیادت حکومت ایم این سی کمپنیوں کو ہی اپنی اولین ترجیح دے رہی ہے ۔ انہوں نے راست وزیر اعظم کو بھی اپنی تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ وزیر اعظم مسٹر نریندر مودی کے کہنے کے مطابق ریاستوں کی ترقی کے ذریعہ ہی ملک کی ترقی بھی ممکن ہے ۔ لیکن ان کی ( وزیر اعظم کی ) باتوں اور عملی اقدامات میں زمین و آسمان کا فرق پایا جاتا ہے ۔ اس موقعہ پر وزیر فینانس ریاست تلنگانہ مسٹر ای راجندر نے گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن انتخابی نتائج پر اپنے زبردست ردعمل کا اظہار کیا اور ٹی آر ایس ( تلنگانہ راشٹرا سمیتی ) کے امیدواروں کی شاندار کامیابی پر اپنی مسرت و خوشی کا اظہار کیا ۔ اور کہا کہ گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن انتخابات کے نتائج نے ہم تمام کی ذمہ داریوں میں مزید اضافہ کیا ہے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ گذشتہ 18 ماہ کے دوران حکومت تلنگانہ کی کارکردگی ہی جی ایچ ایم سی انتخابات میں ٹی آر ایس پارٹی امیدواروں کی کامیابی کا ایک ثبوت ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT