Wednesday , November 22 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ کے ہاسپٹلس میں 20 ڈائیلائسیس یونٹس کی منظوری

تلنگانہ کے ہاسپٹلس میں 20 ڈائیلائسیس یونٹس کی منظوری

حیدرآباد ۔ 19 ڈسمبر (ایجنسیز) ڈائیلائسیس کے مریضوں کیلئے خوشخبری کی بات ہیکہ ریاستی حکومت تلنگانہ نے ریاست بھر میں 20 ہاسپٹلس بشمول راجیو گاندھی انسٹیٹیوٹ آف میڈیکل سائنسیس (RIMS)، عادل آباد میں عوامی ۔ خانگی شراکت (PPP) ماڈل پر ہیمو ڈائیلائسیس بلاکس کے قیام کی اجازت دے دی ہے۔ تلنگانہ ویدئیا ودھانا پریشد (TVVP) جس نے اس کے ایڈمنسٹریٹیو کنٹرول کے تحت ہاسپٹلس میں ڈائیلائسیس یونٹس کے قیام کیلئے پانی اور برقی کی سہولتوں کی دستیابی کے ساتھ موزوں جگہ کی نشاندہی کی ہے، حکومت سے پی پی پی ماڈل میں ٹنڈرس طلب کرتے ہوئے ڈائیلائسیس یونٹس کے قیام کیلئے اجازت دینے کی اپیل کی ہے۔ اس پر حکومت نے جمعہ کو ٹی وی وی پی کو ہدایت دی کہ آر آئی ایم ایس عادل آباد، تانڈور، ونستھلی پورم (رنگاریڈی)، سنگاریڈی، سدی پیٹ (میدک) منچریال، نرمل، اٹنور (عادل آباد)، سوریہ پیٹ، نلگنڈہ، بھدراچلم (کھمم)، یٹورونگرم، محبوب آباد (ورنگل)، جگتیال، کریم نگر، گدوال، ونپرتی، ناگرکرنول، محبوب نگر اور کاماریڈی (نظام آباد) میں یونٹس کے قیام کیلئے پی پی پی موڈ میں ٹنڈرس طلب کئے جائیں۔ ٹی وی وی پی ؍ ڈائرکٹر ، آر آئی ایم ایس عادل آباد کو سرویس پروائیڈرس کے ساتھ میمورنڈم آف اگریمنٹ کرنے کیلئے مجاز گردانا گیا ہے۔ یہ معاہدہ اس پر دستخط کرنے کی تاریخ سے پانچ سال کی مدت کیلئے کارآمد ہوگا ۔ اس سلسلہ میں بتاتے ہوئے RIMS کے ہاسپٹل سپرنٹنڈنٹ کے اشوک نے کہا کہ وزیرصحت سبی لکشماریڈی نے جنہوں نے حال میں آر آئی ایم ایس، عادل آباد کا دورہ کیا۔ ایڈمنسٹریشن کو تیقن دیا کہ اس ہاسپٹل میں جلد ہی ایک ڈائیلائسیس یونٹ کو منظور کیا جائے گا۔ انہوں نے مریضوں کے مسائل سے واقف ہونے کے بعد یہ تیقن دیا جو اب نظام آباد، کریم نگر اور ورنگل میں موجود ڈائیلائسیس یونٹس پر انحصار کررہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT