Saturday , December 16 2017
Home / Top Stories / تلنگانہ کے 28 اضلاع میں ایک سال کے اندر تمام سہولتیں

تلنگانہ کے 28 اضلاع میں ایک سال کے اندر تمام سہولتیں

کلکٹر اور پولیس دفاتر کی تعمیرات کیلئے ٹنڈرس کی طلبی کی ہدایت ، چیف منسٹر کا جائزہ اجلاس
حیدرآباد۔ 19 جنوری (سیاست نیوز) چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر نے ریاست کے 28 اضلاع کو اندرون ایک سال تمام سہولتوں سے آراستہ کرنے اور عوام و عہدیداروں کی ضرورت کے مطابق کلکٹرس اور پولیس آفسوں کی تعمیرات کیلئے ڈیزائن تیار کرتے ہوئے ٹنڈرس طلب کرنے کی ہدایت دی۔ ان ہیڈآفس کی تعمیرات کیلئے بجٹ میں رقمی منظوری دینے کا تیقن دیا۔ آج چیف منسٹر نے پرگتی بھون میں آفسوں کی تعمیرات کا جائزہ لیا ہے جس میں وزراء جگدیش ریڈی، جے کرشنا راؤ حکومت کے مشیراعلیٰ راجیو شرما، چیف سیکریٹری ایس پی سنگھ کے علاوہ دوسرے اعلیٰ عہدیدار موجود تھے۔ چیف منسٹر کے سی آر نے عہدیداروں کو مشورہ دیا کہ اس طرح آفسوں کی تعمیرات کی جائے جس سے نظم و نسق چلانے میں عہدیداروں کو آسانی اور عوام کو بھی سہولتیں حاصل ہوسکیں۔ انہوں نے کہا کہ اضلاع سنگاریڈی، نلگنڈہ اور رنگاریڈی کے دفاتر کیلئے نئی عمارتیں تعمیر ہوچکی ہیں۔ ماباقی 28 اضلاع میں سوائے محکمہ پولیس اور محکمہ فائر کے دفاتر کے تمام محکمہ جات کے دفاتر کیلئے ایک ہی انٹیگریٹیڈ آفس بلڈنگ تعمیر کی جائے تاکہ ایک ہی چھت کے نیچے تمام محکمہ جات خدمات انجام دے سکے اور ایک دوسرے سے آپس میں تال میل برقرار ہے۔ مستقبل کی ضرورت کو بھی مدنظر رکھتے ہوئے آفس بلڈنگس کے ڈیزائن تیار کرنے کی ہدایت دی۔ چیف منسٹر نے اس موقع پر محکمہ عمارت و شوارع کی جانب سے سرکاری عمارتوں کی تعمیرات کیلئے تیار کردہ ڈیزائن کا بھی جائزہ لیا۔ ان دفاتر میں کام کرنے والے عہدیداروں، ملازمین اور عوام کی سہولتوں کو خصوصی اہمیت دینے پر بھی زور دیا۔

مختلف موقعوں پر اسٹیٹ فیسٹیول، دوسرے سرکاری پروگرامس کے انعقاد، چیف منسٹر اور وزراء کے دورے، اضلاع کے موقعوں پر جائزہ اجلاس طلب کرنے مختلف طبقات کے اجلاس طلب کرنے کیلئے کانفرنس ہال وغیرہ تعمیر کرنے کی ہدایت دی۔ عمارات کی تعمیرات میں ہر روم میں روشنیوں کے انتظامات، احاطہ میں لینڈ اسکیپنگ، واکنگ ٹریکس، زیادہ سے زیادہ گاڑیوں کی پارکنگ کیلئے وسیع پارکنگ کے انتظامات، عہدیداروں، ملازمین اور دفاتر کو پہونچنے والے عوام کیلئے بیت الخلائیں، کینٹین، لنچ رومس، بینکس، اے ٹی ایم، می سیوا سنٹرس، ریکارڈ روم، اسٹرانگ روم، برقی سب اسٹیشن، جنریٹر، فائر اسٹیشن وغیرہ کی تمام سہولتیں مہیا کرانے پر زور دیا۔ ایک ہزار افراد کیلئے کانفرنس ہال تعمیر کرنے اور ہر ضلع میں 20 تا 29 ایکر اراضی پر ہیڈکوارٹر دفاتر تعمیر کرنے مستقبل میں ضرورت کے مطابق ان عمارتوں میں مزید سہولتیں فراہم کرنے کیلئے بھی گنجائش رکھنے کا مشورہ دیا۔ تمام اضلاع میں پریڈ گراؤنڈ کے ساتھ پولیس دفاتر کی عمارتیں تعمیر کرنے تملناڈو کے طرز پر تعمیرات کو یقینی بنانے کیلئے ایک وفد کو تملناڈو کا دورہ کراتے ہوئے رپورٹ تیار کرنے کا مشورہ دیا۔ پولیس کے اعلیٰ عہدیداروں کو مشورہ دیا کہ وہ اپنے ماہانہ اجلاسوں کو کرائم میٹنگس سے تعبیر  نہ کریں۔ اس سے عوام میں منفی پیغام پہونچتا ہے۔ اگر پولیس ہی جرائم کی زبان استعمال کریں تو کیسا؟ میٹنگس کے نام تبدیل کرنے پر زور دیا۔

TOPPOPULARRECENT