Monday , December 18 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ گیر سطح پر ویلنیس سنٹرس کا قیام وقت کی اہم ضرورت

تلنگانہ گیر سطح پر ویلنیس سنٹرس کا قیام وقت کی اہم ضرورت

مسئلہ کی عاجلانہ یکسوئی کیلئے حکومت سے ٹی ایس میسا کی اپیل

حیدرآباد 29 اکٹوبر (راست) ریاست تلنگانہ کے قیام کے بعد سرکاری ملازمین، جرنلسٹس کے لئے حکومت کی جانب سے ایمپلائز ہیلت اسکیم کے ذریعہ سے تمام ملازمین، جرنلسٹس کو مفت طبی خدمات فراہم کی جارہی ہے جوکہ ایک خوش آئند بات ہے۔ اس ضمن میں ریاست میں ولنیس سنٹرس کا قیام عمل میں لایا گیا جو حیدرآباد میں خیریت آباد اور ونستھلی پورم میں واقع ہے۔ چونکہ پوری ریاست میں صرف یہ دو ویلینس سنٹرس قائم ہیں جس سے تمام اضلاع کے سرکاری ملازمین، جرنلسٹس اور اُن کے افراد خاندان کو علاج کیلئے حیدرآباد کا رُخ کرنا پڑرہا ہے اور کافی مشکلات کا سامنا کرنا ہے۔ ضرورت اس بات کی ہے کہ ماباقی تمام 30 اضلاع میں ویلینس سنٹرس کا قیام عمل میں لایا جائے تاکہ اضلاع کے سرکاری ملازمین کو سہولت ہو۔ صدر ٹی ایس میسا ایم اے فاروق نے حکومت سے اپیل کی کہ اس مسئلہ کی عاجلانہ یکسوئی کرے۔
l٭l میناریٹی ایمپلائز کوآرڈینیشن کنسلٹینسی اسوسی ایشن کا ماہانہ اجلاس جناب ایم اے قدیر صدر میکا کی صدارت میں منعقد ہوا۔ جس میں وظیفہ یاب اور برسر خدمت ملازمین کے مختلف مسائل و اُمور پر غور و خوض کیا گیا۔ اجلاس میں وظیفہ یابوں سے گزارش کی گئی کہ وہ اپنا لائف سرٹیفکٹ ایس ٹی او میں داخل کریں اور حکومت سے مطالبہ کیا گیا کہ سینئر سٹیزن کو 50 فیصد رعایت آر ٹی سی بس میں دی جائے اور انھیں ڈبل بیڈ روم مکانات بھی الاٹ کریں۔ اس اجلاس میں اس بات کا بھی مطالبہ کیا گیا کہ ملازمین کو دونوں شہروں میں ویلنس سنٹرس کا زیادہ سے زیادہ قیام عمل میں لائیں۔ اس لئے ویلسن سنٹر کا قیام ناگزیر ہے اور ساتھContributory Pension Scheme کو منسوخ کرتے ہوئے ریگولر پنشن سسٹم اور تمام تلنگانہ پنشنرس کو تلنگانہ انٹنسیو کی اجرائی، پی آر سی کے احکام جلد از جلد جاری کریں۔ اجلاس میں سید مبشرالدین معتمد عمومی، سیدناظم الدین نائب صدر، ڈاکٹر محمد ناظم علی تنظیمی معتمد ، ایم اے صمد اعظمی مشیر اعلیٰ، ایم اے قدیر صدر میکا، ڈاکٹر سیادت علی شریک صدر، سید شرف الدین خازن، سید احمد، سید جمال اور دیگر نے شرکت کی۔

TOPPOPULARRECENT