تلنگانہ یونیورسٹی یکم ؍ ڈسمبر تک بند، طلبہ کے احتجاج پر تعطیلات کا اعلان

اکیڈیمک کنسلٹینٹس کے احتجاج پر طلبہ کی تائید و حمایت، دیرینہ مسائل کو حل کرنے کا مطالبہ

حیدرآباد ۔ 24 نومبر (سیاست نیوز) تلنگانہ یونیورسٹی میں طلباء کے جاری احتجاج کے پیش نظر یونیورسٹی حکام نے یکم ؍ ڈسمبر تک یونیورسٹی کو بند رکھتے ہوئے تعطیلات دینے کا اعلان کیا ہے۔ ہاسٹلس بند کردیئے جانے کی وجہ سے طلباء نے بڑے پیمانے پر احتجاج کا آغاز کیا تھا۔ بتایا جاتا ہیکہ تلنگانہ یونیورسٹی میں تعلیمی حالات کو بہتر بنانے اور دیرینہ حل طلب مسائل کی عاجلانہ یکسوئی کا مطالبہ کرتے ہوئے یونیورسٹی اکیڈیمک کنسلٹنٹس گذشتہ زائد از 25 یوم سے ہڑتال کررہے ہیں۔ اکیڈیمک کنسلٹنٹس کی جاری ہڑتال کی طلباء بھرپور تائید کررہے ہیں۔ اس تائید کے پیش نظر یونیورسٹی میں پائی جانے والی صورتحال کی وجہ سے یونیورسٹی حکام نے آئندہ ماہ یکم ؍ ڈسمبر تک یونیورسٹی کو تعطیلات دینے کا اعلان کیا اور تمام ہاسٹلوں کو بند کرکے تالے ڈال دیئے گئے اور ہاسٹلوں میں زبردستی مقیم طلباء کو ہاسٹلس کا تخلیہ کردینے کی ہدایت دیتے ہوئے باقاعدہ طور پر نوٹسیں جاری کئے گئے۔ طلباء نے یونیورسٹی حکام کے تعطیلات دینے کے اعلان پر اپنے احتجاج میں مزید شدت پیدا کرکے یونیورسٹی حکام کے فیصلہ کی پرزور مخالفت کی اور کہاکہ خواہ تعطیلات کا اعلان کرنے اور ہاسٹلس کو بند کردینے کے باوجود تعلیمی صورتحال میں بہتری پیدا ہونے تک (تدریس میں بہتری پیدا ہونے تک) اکیڈیمک کنسلٹنٹس کی جاری ہڑتال کی بھرپور تائید کرنے کا اعلان کیا۔ اسی دوران بتایا جاتا ہیکہ بھوک ہڑتال کرنے والے طالب علم اکھیل کی صورتحال نازک ہوجانے کی وجہ سے بھوک ہڑتالی طالب علم کو ڈچپلی ہاسپٹل منتقل کردیا گیا۔

TOPPOPULARRECENT