Monday , June 18 2018
Home / شہر کی خبریں / تلگو دیشم پارٹی حیدرآباد میں گورنر کے اختیارات کے نفاذ کی کوشاں

تلگو دیشم پارٹی حیدرآباد میں گورنر کے اختیارات کے نفاذ کی کوشاں

حیدرـآباد۔/17جون ، ( سیاست نیوز) ٹی آر ایس کے رکن قانون ساز کونسل یادو ریڈی نے الزام عائد کیا کہ تلگودیشم پارٹی نوٹ برائے ووٹ اسکام سے خود کو بچانے کیلئے حیدرآباد میں گورنر کے اختیارات کے نفاذ کی کوشش کررہی ہے۔ اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے یادو ریڈی نے کہا کہ مرکزی حکومت سے اس بات کی نمائندگی کی جارہی ہے کہ تنظیم جدید قانون کے

حیدرـآباد۔/17جون ، ( سیاست نیوز) ٹی آر ایس کے رکن قانون ساز کونسل یادو ریڈی نے الزام عائد کیا کہ تلگودیشم پارٹی نوٹ برائے ووٹ اسکام سے خود کو بچانے کیلئے حیدرآباد میں گورنر کے اختیارات کے نفاذ کی کوشش کررہی ہے۔ اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے یادو ریڈی نے کہا کہ مرکزی حکومت سے اس بات کی نمائندگی کی جارہی ہے کہ تنظیم جدید قانون کے سیکشن 8پر عمل کرتے ہوئے حیدرآباد کو گورنر کے کنٹرول میں دیا جائے، لاء اینڈ آرڈر گورنر کے ہاتھوں میں رہے۔ انہوں نے کہا کہ حیدرآباد اگرچہ مشترکہ دارالحکومت ہے لیکن یہاں سیکشن 8 پر عمل آوری کی کوئی گنجائش نہیں۔ یادو ریڈی نے کہا کہ کرپشن سے متعلق یہ اسکام دنیا بھر میں تلگودیشم کی رسوائی کا سبب بن چکا ہے اور ہر سطح پر لوگ اس اسکام کے بارے میں بات چیت کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حیرت اس بات پر ہے کہ تلگودیشم اُن افراد کی پشت پناہی کررہی ہے جو اس اسکام میں راست طور پر ملوث ہیں۔ اگر چندرا بابو نائیڈو کا اس اسکام سے کوئی تعلق نہیں تو انہیں ریونت ریڈی کے خلاف کارروائی کرنی چاہیئے تھی برخلاف اس کے وہ تلنگانہ حکومت پر فون ٹیاپنگ کا الزام عائد کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اینٹی کرپشن بیورو کو اس بات کا اختیار حاصل ہے کہ وہ ریاست میں کسی بھی بدعنوانی کے خلاف کارروائی کرے۔ انہوں نے اینٹی کرپشن بیورو کے دائرہ کار کو چیلنج کرنے پر نکتہ چینی کی اور کہا کہ تلگودیشم قائدین کو قانون سے واقفیت حاصل کرنی چاہیئے۔ انہوں نے کہا کہ چندرا بابو نائیڈو نے ریاست کی تقسیم کے وقت گورنر کی حیثیت سے ای ایس ایل نرسمہن کی برقراری کی خواہش کی تھی لیکن آج وہی تلگودیشم قائدین گورنر کے خلاف بیانات دے رہے ہیں۔ وزراء اور تلگودیشم قائدین کی جانب سے گورنر کی تبدیلی اور ان پر جانبداری کے الزامات افسوسناک ہیں۔ انہوں نے سوال کیا کہ کیا دستور کے مطابق فرائض انجام دینا گورنر کی غلطی ہے؟۔

TOPPOPULARRECENT