Thursday , June 21 2018
Home / شہر کی خبریں / تلگو دیشم کے ارکان کی معطلی میں جانبدارانہ موقف کا الزام مسترد

تلگو دیشم کے ارکان کی معطلی میں جانبدارانہ موقف کا الزام مسترد

بی جے پی کے اعتراضات پر وزیر امور مقننہ ہریش راؤ کا جواب

بی جے پی کے اعتراضات پر وزیر امور مقننہ ہریش راؤ کا جواب
حیدرآباد ۔ 9 ۔ مارچ (سیاست نیوز) وزیر امور مقننہ ہریش راؤ نے بی جے پی کے اس الزام کو مسترد کردیا کہ تلگو دیشم ارکان کی معطلی کے سلسلہ میں حکومت نے جانبدارانہ موقف اختیار کیا ہے۔ اسمبلی میں بی جے پی فلور لیڈر ڈاکٹر لکشمن کے اعتراضات کے جواب میں ہریش راؤ نے کہا کہ تلگو دیشم اور بی جے پی حلیف جماعتیں ہیں اور ایم ایل سی انتخابات میں متحدہ طور پر مقابلہ کر رہی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ انتخابات میں فائدہ کیلئے دونوں جماعتیں اس طرح کی حرکتیں کر رہی ہیں۔ انہوں نے بی جے پی فلور لیڈر سے سوال کیا کہ ایوان میں چائے کے وقفہ سے قبل پانچ منٹ تک اظہار خیال کے دوران انہیں تلگو دیشم ارکان کی معطلی کا خیال کیوں نہیں آیا؟ چائے کے وقفہ کے بعد کیوں اس مسئلہ کو اٹھا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ چائے کے وقفہ کے دوران تلگو دیشم کی جانب سے اس سلسلہ میں ہدایت وصول ہونے کے بعد بی جے پی ارکان مخالفت کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی فلور لیڈر سیاسی مقصدر براری کے تحت حکومت پر اپوزیشن کی آواز دبانے کا الزام عائد کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اگر ایوان میں برسر اقتدار جماعت کے ارکان ہنگامہ آرائی میں ملوث پائے گئے تو وہ بھی معذرت خواہی کریں گے۔ انہوںنے تیقن دیا کہ فلور لیڈرس کے ساتھ دوبارہ اجلاس طلب کرتے ہوئے ویڈیو فوٹیج کا جائزہ لیا جائے گا۔ ہریش راؤ نے کہا کہ حکومت کسی مخصوص فرد یا جماعت کے خلاف نہیں ہے۔ وزیر امور مقننہ نے کہا کہ ایوان میں ہنگامہ آرائی سے ایوان کی توہین ہوتی ہے لہذا تمام جماعتوں کو قواعد کے مطابق کارروائی چلانی چاہئے تاکہ عوامی مسائل پر مباحث ہوسکیں۔ انہوں نے کہا کہ جو بھی رکن قواعد کی خلاف ورزی کرے گا ، اس کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔

TOPPOPULARRECENT