Tuesday , October 23 2018
Home / Top Stories / تلگو شعراء و مصنفین کیلئے کل ترغیبات کا اعلان متوقع

تلگو شعراء و مصنفین کیلئے کل ترغیبات کا اعلان متوقع

عالمی کانفرنس میں 47 ممالک، 17 ریاستوں کے مندوبین کی شرکت : کے سی آر

حیدرآباد۔ 17 ڈسمبر (این ایس ایس) چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے شہر کے 6 آڈیٹوریموں میں جاری عالمی تلگو کانفرنس پر مداحوں کے پرجوش ردعمل پر خوش کا اظہار کیا ہے۔ تلنگانہ سرسوت پریشد ہال میں منعقدہ ایک تقریب میں شتاودھانی راما شرما کو تہنیت پیش کرتے ہوئے چیف منسٹر پرانی یادوں میں چلے گئے اور بیان کیا کہ ان کے اساتدہ نے انہیں کس طرح ادبی دُنیا سے مربوط و منسلک ہونے میں مدد کی تھی۔ کے سی آر نے کہا کہ اس عالمی کانفرنس کے اختتامی روز 19 ڈسمبر کو وہ تلگو ادیبوں اور شاعروں کیلئے چند اہم ترغیبات کا اعلان کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ اس کانفرنس کے ضمن میں تمام 6 آڈیٹوریمس مداحوں سے کھچاکھچ بھرے ہوئے ہیں۔ 47 ممالک، 17 ریاستوں اور ایک مرکزی زیرانتظام علاقہ سے مندوبین پہونچے ہیں جس سے اس عالمی ادبی پروگرام سے ان کی دلچسپی کا اظہار ہوتا ہے۔ تلنگانہ کے چیف منسٹر نے کہا کہ ’’تلنگانہ میں ادیبوں، شاعروں اور اسکالروں کی کوئی کمی نہیں ہے۔ یہ ہماری ذمہ داری ہے کہ اس زبان کے فروغ کیلئے ہم انہیں آگے لائیں‘‘۔ کے سی آر اپنے خطاب کے دوران ماضی کی یادوں میں کھو گئے اور ایک واقعہ یاد دلاتے ہوئے کہا کہ ’’1970ء کے عشرہ میں وہ انٹرمیڈیٹ کے طالب علم کی حیثیت سے ایک لیکچرر کے زیرقیادت گروپ میں شریک تھے جو ایک ادبی تقریب میں شرکت کے لئے حیدرآباد پہونچا تھا‘‘۔ انہوں نے کہا کہ ’’ایک پولیس ٹیم نے ہمیں روک دیا اور ہمارے سوٹ کی تلاش لی اور صرف کتابیں پانے پر انہوں نے اپنے مقام پر روانہ ہونے کی اجازت دے دی۔ اس واقعہ سے لیکچرر کو کافی تکلیف پہونچی تاہم انہوں نے ہمیں یہ سمجھایا تھا کہ اس واقعہ سے پریشان نہ ہوں بلکہ ادبی پروگرام پر توجہ مرکوز رکھی جائے‘‘۔ کے سی آر نے کہا کہ ’’میرے والد اگرچہ یہ چاہتے تھے کہ ’’میں ڈاکٹر یا انجینئر بن جاؤں لیکن میرے ٹیچرس مجھ پر ادبی دنیا کے دروازے کھول دیئے اور مجھ پر دانشورانہ علم کی نوازش کی۔ ان کی اس حوصلہ افزائی نے مجھے 3,000 نظمیں پڑھنے کے قابل بنادیا۔ کے سی آر کے ان ادبی کلمات پر شرکاء نے حیرت و مسرت کا اظہار کیا۔

TOPPOPULARRECENT