Saturday , December 16 2017
Home / شہر کی خبریں / تلگو فلم کے پوسٹر کے پس منظر میں گستاخی

تلگو فلم کے پوسٹر کے پس منظر میں گستاخی

اللہ اور پیغمبراسلام ؐ کے ناموں کا استعمال، ریجنل سنسر بورڈ کو نوٹس، وضاحت طلب

حیدرآباد۔/9جنوری، ( سیاست نیوز) ریاستی اقلیتی کمیشن نے کمشنر پولیس حیدرآباد اور ریجنل سنسر بورڈ کو نوٹس جاری کی ہے جس میں ایک تلگو فلم کے پوسٹر کے پس منظر میں لفظ ’اللہ ‘ اور پیغمبر اسلام کے نام کے استعمال کے بارے میں وضاحت طلب کی گئی ہے۔ چیرمین اقلیتی کمیشن عابد رسول خاں کے مطابق آصف نگر کے ساکن خواجہ تنویر احمد نے کمیشن کو شکایت کی کہ تلگو فلم ’ نا ناکو پریماتو ‘ کے نیم عریاں پوسٹر کے پس منظر میںاللہ اور پیغمبر اسلام کے نام کا استعمال کیا گیا ہے۔ اس فلم کے پروڈیوسر بی وی ایم ایس پرساد ہیں جبکہ دیوی سری پرساد ڈائرکٹر ہیں۔ فلم کے ہیرو جونیر این ٹی آر اور ہیروئن راکول پریت سنگھ ہیں۔ پوسٹر پر نیم عریاں رقص کے پس منظر میں ان مقدس ناموں کا استعمال کیا گیا جس سے مسلمانوں کے جذبات مجروح ہوتے ہیں۔ شکایت میں کہا گیا ہے کہ پروڈیوسر اور ڈائرکٹر نے جان بوجھ کر مسلمانوں کے جذبات کو مجروح کرنے کی کوشش کی ہے۔ کمیشن سے اس سلسلہ میں مقدمہ درج کرنے کی اپیل کی گئی ہے۔ اقلیتی کمیشن نے شکایت درج کرتے ہوئے کمشنر پولیس اور ریجنل سنسر بورڈ حیدرآباد کے آفس انچارج کو نوٹس جاری کرتے ہوئے اندرون سات یوم جواب داخل کرنے کی ہدایت دی ہے جس میں پروڈیوسر، ڈائرکٹر، ایکٹرس اور دیگر ذمہ داروں کے خلاف فوجداری مقدمہ درج کرنے کے بارے میں وضاحت طلب گئی ہے۔ اسی دوران کمیشن نے اس متنازعہ پوسٹر کو فوری ہٹانے کی سفارش کی ہے۔ اسی دوران سینکڑوں کی تعداد میں مسلم نوجوانوں نے آج اے سی گارڈ میں واقع سنسر بورڈ کے دفتر کے روبرو مظاہرہ کیا اور فلم کے سین اور پوسٹر سے مقدس ناموں کو حذف کرنے کا مطالبہ کیا۔

TOPPOPULARRECENT