Saturday , November 18 2017
Home / شہر کی خبریں / تکمیل انجینئرنگ کے بعد حصول روزگار کیلئے مساعی پر زور

تکمیل انجینئرنگ کے بعد حصول روزگار کیلئے مساعی پر زور

دفتر سیاست میں سیمینار ،منور علی ، ڈاکٹر عتیق الرحمن ، ایم اے فہیم کے لیکچرس
حیدرآباد۔ 20 ڈسمبر (سیاست نیوز) اِنجینئرنگ کی ڈگری کی تکمیل کے بعد جب کوئی روزگار کے میدان میں جاتا ہے تو اس کو صرف ڈگری کام نہیں آتی بلکہ اسے درکار ضروریات کو پورا کرنا پڑتا ہے۔ اس ضمن میں ’’انجینئرس سیمینار‘‘ جو دفتر سیاست کے محبوب حسین جگر ہال پر منعقد ہوا، کو مخاطب کرتے ہوئے مسٹر منور علی نے کہا کہ طلبہ کو اپنے مستقبل کے بارے میں مثبت سوچ کے ساتھ آگے بڑھنا چاہئے۔ آج انجینئر کی بہتات ہے لیکن انہیں حصول ملازمت کیلئے پھر تیاری کرنی ہوگی۔ تیز رفتار ترقی سے امیدواروں کو بھی ہم آہنگ ہوکر اس میں شامل ہونا چاہئے۔ اس بامقصد سیمینار میں ڈاکٹر عتیق الرحمن وائس پرنسپل شاداں انجینئرنگ کالج نے اپنے توسیعی لیکچر میں انجینئرنگ کے مختلف برانچیس خاص طور پر میکانیکل اور الیکٹریکل برانچ کے امیدواروں کو مفید مشورے دیتے ہوئے بتایا کہ ان شعبہ جات میں جو تبدیلیاں ہورہی ہیں، ان سے واقف ہونے سے نہ صرف ملازمت حاصل کرسکتے ہیں بلکہ ترقی کے مواقع فراہم ہوتے ہیں۔ انجینئرس کے اس سیمینار کو مخاطب کرتے ہوئے مسٹر خواجہ علی شعیب اسوسی ایٹ پروفیسر شاداں انجینئر کالج نے الیکٹریکل انجینئرنگ شعبہ کی تفصیلات بتائیں اور ویڈیو کلپ کے حوالے سے کہا کہ ’’سیکھو، کماؤ اور آگے بڑھو‘‘ کے اُصول کو اپنانے کا مشورہ دیا۔ مسٹر حبیب چشتی نے صحیح وقت پر صحیح مشورہ اور رہنمائی سے متعلق کہا کہ اگر غلط شخص سے رہنمائی حاصل کی گئی تو اس کے نتائج بھی غلط ہی نکلیں گے۔ پروفیسر ایم اے منعیم نے کہا کہ انٹرویو اِسکل، بائیو ڈاٹا کی تیاری کے ساتھ ہر قسم کی ملازمت کیلئے تیار رہنا چاہئے۔ یہ نہ سوچیں کہ ملازمت ملے گی یا نہیں، انٹرویو میں پاس ہوکر منتخب ہوں گے یا نہیں  بلکہ ہر اعتبار سے خود کو اہل بنائیں۔ محمد معید سیکریٹری ماسٹر مائنڈرس گروپ آف انسٹیٹیوشن نے مہمانوں کو مومنٹوز دیئے۔ طلبہ ، انجینئرنگ کی تکمیل کے بعد حصول ملازمت کیلئے اہلیت اور درکار ضروریات کو پورا کریں۔ اس موقع پر پراجیکٹ پر مختلف ویڈیو کلپس کے ذریعہ رہنمائی کی گئی۔

TOPPOPULARRECENT