Tuesday , April 24 2018
Home / سیاسیات / تھانے ضلع پریشد پر شیوسینا ۔ این سی پی کا قبضہ

تھانے ضلع پریشد پر شیوسینا ۔ این سی پی کا قبضہ

16 نشستوں کے باوجود بی جے پی اقتدار سے باہر
تھانے۔ 15 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) شیوسینا اور نیشنلسٹ کانگریس پارٹی (این سی پی) نے تھانے ضلع پریشد پر قبضہ کرلیا ہے جبکہ 16 نشستوں کے بعد بھی بی جے پی کو اس مرتبہ ضلع پریشد سے باہر رہنے پر مجبور ہوگئی۔ ذرائع کے مطابق شیوسینا اُمیدوار مجوشاہ جادھو کو صدر ضلع پریشد کے عہدہ کیلئے بلامقابلہ منتخب کرلیا گیا ہے۔ اسی طرح سے نیشنلسٹ کانگریس پارٹی کے امیدوار سبھاش پوار کو ضلع پریشد کے نائب صدر کے عہدہ کیلئے بلامقابلہ انتخاب عمل میں آیا۔ اس صورتحال کو دیکھتے ہوئے بی جے پی امیدوار نے آخری لمحہ میں اپنی نامزدگی کو واپس لے لیا۔ واضح رہے کہ 23 رکنی پریشد کیلئے گزشتہ ماہ انتخاب عمل میں آیا تھا جس میں شیوسینا 26 نشستیں حاصل کی تھیں اور نیشنلسٹ کانگریس پارٹی کو 10 نشستیں حاصل ہوئی تھیں جبکہ بی جے پی نے 16 نشستیں حاصل کی تھیں اور ایک نشست آزاد امیدوار کے حصہ میں آئی تھی۔ اس موقع پر ذرائع ابلاغ سے بات کرتے ہوئے شیوسینا کے وزیر ایکناتھ شنڈے نے کہا کہ این سی پی کے ساتھ یہ شراکت داری مقامی مسائل کی بنیاد پر ہے۔ شنڈے نے مزید کہا کہ ضلع پریشد نے ہمارا اتحاد شیوسینا سربراہ ادھو ٹھاکرے اور این سی پی کے صدر شرد پوار کے درمیان مذاکرات کی بنیاد پر ہوا ہے۔ تاہم انہوں نے اس سوال پر تبصرہ کرنے سے انکار کردیا کہ آیا یہ اتحاد آنے والے اسمبلی انتخابات پر بھی قائم رہے گا یا نہیں۔

TOPPOPULARRECENT