Wednesday , January 17 2018
Home / ہندوستان / تیسرا محاذ ’’پارکنگ کا مقام‘‘، مرکز میں اقتدار ناممکن

تیسرا محاذ ’’پارکنگ کا مقام‘‘، مرکز میں اقتدار ناممکن

کولکتہ ۔ 6 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) بی جے پی نے آج کہا کہ تیسرا محاذ ایک ’’پارکنگ مقام‘‘ کی طرح ہے، جہاں سیاسی جماعتیں آتی اور جاتی رہتی ہیں۔ اس کے علاوہ مرکز نے تیسرے محاذ کی تشکیل کا کوئی امکان نہیں۔ سینئر بی جے پی لیڈر ایم وینکیا نائیڈو نے آج ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ تیسرے محاذ کیلئے مرکز میں حکومت تشکیل دینا محال ہے

کولکتہ ۔ 6 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) بی جے پی نے آج کہا کہ تیسرا محاذ ایک ’’پارکنگ مقام‘‘ کی طرح ہے، جہاں سیاسی جماعتیں آتی اور جاتی رہتی ہیں۔ اس کے علاوہ مرکز نے تیسرے محاذ کی تشکیل کا کوئی امکان نہیں۔ سینئر بی جے پی لیڈر ایم وینکیا نائیڈو نے آج ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ تیسرے محاذ کیلئے مرکز میں حکومت تشکیل دینا محال ہے کیونکہ پہلے ہی ایسی کئی کوششیں ہوچکی ہیں لیکن ناکامی ہوئی۔ یہ تیسرا محاذ ایک پارکنگ لاٹ کی طرح ہے جہاں سیاسی جماعتیں آتی اور جاتی رہتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ تیسرے محاذ میں شامل جماعتوں کا کوئی مشترکہ ایجنڈہ نہیں ہے اور یہ کسی وعدہ پر قائم بھی نہیں رہ سکتی۔ انہوں نے بتایا کہ یہ سیاسی جماعتیں پہلے ایک دوسرے کے خلاف انتخابی مقابلہ کرتی ہیں اور پھر بی جے پی کو روکنے کیلئے متحد ہوجاتی ہیں۔ ان کا کوئی لیڈر نہیں اور ہر شخص وزیراعظم بننا چاہتا ہے۔ اسی لئے اگر یہ محاذ بالفرض اقتدار آ بھی جائے تو ان کا ہر ہفتہ ایک نیا وزیراعظم بنتا رہے گا۔

وینکیا نائیڈو نے کہا کہ کانگریس زیرقیادت یو پی اے حکومت کے اسکامس اور کرپشن کیلئے تیسرے محاذ کی رکن جماعتیں بھی مساوی ذمہ دار ہے کیونکہ انہوں نے یو پی اے کی دونوں میعاد میں تائید کی ہے۔ وینکیا نائیڈو نے کہا کہ تیسرا محاذ قائم کرنے والی جماعتیں خواہ وہ بایاں بازو ہو یا سماج وادی پارٹی۔ وہ یو پی اے حکومت کے گناہوں سے خود کو بری الذمہ نہیں کرسکتیں۔ وینکیا نائیڈو نے عام آدمی پارٹی پر بھی تنقید کی اور اسے کانگریس کی بی ٹیم قرار دیا۔ انہوں نے کہا کہ جب عام آدمی پارٹی نے کانگریس سے ہاتھ ملایا تب ہی اس کی وقعت ختم ہوگئی کیونکہ اس پارٹی نے کانگریس کے خلاف انتخابی مقابلہ کیا تھا اور کانگریس قائدین کو کرپشن پر جیل بھیجنے کا وعدہ کیا تھا۔ عام آدمی پارٹی کارکنوں اور بی جے پی کارکنوں کے مابین کل نئی دہلی میں جھڑپوں کا حوالہ دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ عام آدمی پارٹی انتخابات سے قبل سرخیوں میں رہنے کیلئے کشیدگی پیدا کررہی ہے۔

لکھنؤ ۔ 6 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) سماج وادی پارٹی سربراہ ملائم سنگھ یادو نے نوجوانوں سے کہا ہے کہ 1977ء کا اعادہ کرتے ہوئے لوک سبھا انتخابات میں کانگریس کا صفایا کردیں اور مرکز میں سماج وادی پارٹی کی زیرقیادت تیسرے محاذ کی حکومت کو یقینی بنائیں۔ انہوں نے پارٹی کی سائیکل یاترا کے اختتام پر خطاب کرتے ہوئے کہا کہ جب 1974ء میں لوک نائیک جئے پرکاش کی قیادت اٹھی تب 1977ء میں کانگریس کا صفایا ہوگیا۔ اب نوجوانوں کو تاریخ کا اعادہ کرنا چاہئے۔ وہ سماج وادی پارٹی کی زیرقیادت تیسرے محاذ کی حکومت کو یقینی بنائیں ، کیونکہ یہ بہترین موقع ہے۔

TOPPOPULARRECENT