Friday , June 22 2018
Home / دنیا / تیل کی سربراہی میں کمی پر اوپیک کی ایران سے امداد طلبی

تیل کی سربراہی میں کمی پر اوپیک کی ایران سے امداد طلبی

ویانا۔ 26 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) اوپیک کو نان کارٹل ارکان سے مدد کی ضرورت ہے تاکہ تیل کی سربراہی میں کمی کے مسئلہ کی یکسوئی کی جائے جو امکان ہے کہ آئندہ سال مزید شدت اختیار کرے گا۔ ایران کے وزیر تیل ڈی جان نامدار زنگانیہ نے ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بازاروں کے تمام ماہرین کو یقین ہے کہ ہم بازار میں ضرورت سے زیادہ سربراہی

ویانا۔ 26 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) اوپیک کو نان کارٹل ارکان سے مدد کی ضرورت ہے تاکہ تیل کی سربراہی میں کمی کے مسئلہ کی یکسوئی کی جائے جو امکان ہے کہ آئندہ سال مزید شدت اختیار کرے گا۔ ایران کے وزیر تیل ڈی جان نامدار زنگانیہ نے ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بازاروں کے تمام ماہرین کو یقین ہے کہ ہم بازار میں ضرورت سے زیادہ سربراہی کرسکتے ہیں اور آئندہ سال ہم ایسا کریں گے، لیکن زنگانیہ نے کہا کہ یہ تیل کی پیدا کرنے والے ممالک کی تنظیم کی ذمہ داری ہے کہ حد سے زیادہ تیل کی سربراہی اس کے نتیجہ میں خام تیل کی قیمتیں گزشتہ چار سال کی اقل ترین سطح پر پہنچ گئی ہیں، سے نمٹیں۔ انہوں نے کہا کہ اس صورتِ حال سے نمٹنے کے لئے ہمیں نان اوپیک تیل پیدا کرنے والے ممالک کی مدد کی ضرورت ہے تاکہ بازار کا انتظام کیا جاسکے۔ ویانا میں آمد کے بعد جو کارٹل کا ہیڈکوارٹرس ہے، کہا کہ جمعرات کے دن اوپیک کا اجلاس حالیہ برسوں کا اہم ترین اجلاس ہوگا، کیونکہ خام تیل کا مستقبل جون سے 30 فیصد سے زیادہ کم ہوچکا ہے، کیونکہ تیل کی سربراہی ضرورت سے زیادہ ہے۔

TOPPOPULARRECENT