Monday , January 22 2018
Home / عرب دنیا / تیل کی قیمت 20 ڈالر بھی ہوجائے تو پیداوار کم نہیں ہوگی

تیل کی قیمت 20 ڈالر بھی ہوجائے تو پیداوار کم نہیں ہوگی

ریاض ۔ 23 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) سعودی عرب نے آج کہا کہ عالمی مارکٹ میں خام تیل کی قیمتیں اگر 20 امریکی ڈالر فی بیرل تک گھٹ جائیں تو بھی تیل پیداوار اور برآمد کرنے والی تنظیم اوپیک اپنی پیداوار میں کمی نہیں کرے گی۔ اوپیک کے غیر رکن ممالک کی جانب سے تیل کی پیداوار میں کمی نہ کرتے ہوئے اوپیک سے اس کی پیداوار میں کمی کی توقع رکھنا غیرمنصفانہ

ریاض ۔ 23 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) سعودی عرب نے آج کہا کہ عالمی مارکٹ میں خام تیل کی قیمتیں اگر 20 امریکی ڈالر فی بیرل تک گھٹ جائیں تو بھی تیل پیداوار اور برآمد کرنے والی تنظیم اوپیک اپنی پیداوار میں کمی نہیں کرے گی۔ اوپیک کے غیر رکن ممالک کی جانب سے تیل کی پیداوار میں کمی نہ کرتے ہوئے اوپیک سے اس کی پیداوار میں کمی کی توقع رکھنا غیرمنصفانہ ہے۔ سعودی عرب کے وزیر تیل علی النعیمی نے ایک صنعتی ہفتہ وار میڈل ایسٹ اکنامک سروے کو دیئے گئے انٹرویو میں کہاکہ ’’اس (فی بیال خام تیل) کی قیمت 20 ڈالر، 40 ڈالر، 50 یا 60 ڈالر تک گھٹ جائے تو اس کی کوئی اہمیت نہیں ہے۔ علی النعیمی نے برخلاف معمول ایک تفصیلی تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ اس پالیسی کا انکشاف کیا۔ اوپیک میں سعودی عرب ہی سب سے بڑا تیل پیدا کرنے والا ملک ہے۔ جہاں یومیہ 30 ملین بیرل تیل کی نکاسی کی حد برقرار رکھا ہے۔ اوپیک کے اس فیصلے نے خام تیل کی عالمی قیمتوں کو بدترین سطح تک گھٹا دیا ہے۔

اس سال جون سے اب تک خام تیل کی قیمتوں میں تقریباً 50 فیصد کمی ہوئی ہے۔ بین الاقوامی مالیاتی ادارہ (آئی ایم ایف) نے کہا ہیکہ سعودی عرب روایتی طور پر طلب و رسد کو متوازن رکھنے کیلئے کام کرتا ہے کیونکہ یہی واحد ملک ہے جس کے پاس زائد پیداوار کی صلاحیت ہے۔ علی النعیمی نے دوران انٹرویو استفسار کیا کہ ’’آیا ایک اعلیٰ قسم کے تیل کے پیداوار کنندہ کو کٹوتی کے لئے کہنا واجبی ہوسکتا ہے؟ جب نسبتاً ناقص معیار کے تیل کے پیداوار کنندگان اپنی نکاسی جاری رکھیں۔ انہوں نے کہا کہ ’’اگر میں قیمت میں اگر پیداوار میں کمی ہوئی تو مارکٹ میں مارکٹ میں میرے حصہ کا کیا ہوگا؟ قیمتوں میں اضافہ تو ضرور ہوگا لیکن امریکی ادارہ شیل، روس اور برازیل میرا حصہ لے لیں گے‘‘۔ انہوں نے کہا کہ تیل کی مجموعی عالمی پیداوار میں 40 فیصد حصہ سعودی عرب کا ہے۔

TOPPOPULARRECENT