ثمرآور سیشن کا اختتام، کانگریس پر تین طلاق کو روکنے کا الزام : اننت کمار

نئی دہلی ۔ 5 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) پارلیمنٹ کا سرمائی اجلاس آج غیرمعینہ مدت کیلئے ملتوی ہوگیا جس کا 15 ڈسمبر کو آغاز ہوا تھا۔ لوک سبھا میں بشمول تین طلاق 12 بلس منظور کئے گئے۔ اسپیکر سمترا مہاجن نے التواء کا اعلان کرتے ہوئے کہاکہ سیشن کے دوران 61 گھنٹے اور 48 منٹ پر محیط 13 اجلاس منعقد ہوئے۔ شوروغل اور التواء کے سبب 15 گھنٹے ضائع ہوئے۔ وزیر پارلیمانی امور اننت کمار نے کہاکہ سرمائی سیشن میں لوک سبھا کی کارکردگی 91.58 فیصد اور راجیہ سبھا کی کارکردگی 56.29 فیصد رہی۔ 13 روزہ مختصر سرمائی سیشن کے دوران لوک سبھا میں 13 اور راجیہ سبھا میں 9 بلس منظور کئے گئے۔ اننت کمار نے کہا کہ ’’میں تمام جماعتوں اور ارکان کا ممنون ہوں کہ انہوں نے دونوں ایوانوں میں اس سیشن کو ثمرآور بنایا‘‘۔ راجیہ سبھا میں تین طلاق بل کی عدم منظوری سے متعلق ایک سوال پر انہوں نے کانگریس کو موردالزام ٹھہرایا اور کہا کہ اس بل کی منظوری کو مؤخر کرنے کیلئے اپوزیشن ہر روز ایک نئے بہانے کا ساتھ رجوع ہوتی رہی ہے۔ واضح رہیکہ آج راجیہ سبھا میں تین طلا ق بل پر اپوزیشن اور حکومت کی بنچوں کے درمیان بحث ہوئی لیکن حکومت اس بل کو منظور کرانے میں ناکام رہی۔

TOPPOPULARRECENT