جائیداد ٹیکس بقایہ جات کی وصولی پر کمشنر بلدیہ کی توجہ

حیدرآباد 15 فروری ( سیاست نیوز ) کمشنر و اسپیشل آفیسر جی ایچ ایم سی سومیش کمار جائیداد ٹیکس کے قدیم بقایاجات کی وصولی پر توجہ مرکوز کئے ہوئے ہیں۔ جاریہ مالیاتی سال کے اختتام کیلئے صرف 45 یوم باقی رہ گئے ہیں ۔ جی ایچ ایم سی ذرائع کے مطابق کمرشیل عمارتوں کی جملہ تعداد 1.21 لاکھ ہے اور ان کمرشیل عمارتوں کے ذریعہ جی ایچ ایم سی کو 623 کروڑ روپئے وصول طلب ہیں جن میں 326 کروڑ روپئے سابقہ بقایاجات ہیں ۔ ذرائع کے مطابق جاریہ سال جی ایچ ایم سی حدود میں جائیداد ٹیکس کے ذریعہ 1000 کروڑ وصول طلب ہیں اور سابقہ بقایاجات ملا کر 1500 کروڑ روپئے وصولی کرنے ممکنہ کوشش کیلئے مسٹر سومیش کمار اقدامات کررہے ہیں اور اس سلسلہ میں بالخصوص کمرشیل عمارتوں سے وصول طلب بینکس رقوم کسی بھی صورت میں حاصل کرلینے کوشش کی جارہی ہے ۔ اس مرتبہ جائیداد ٹیکس کی تفصیلات برقی کنکشن سے مربوط کر کے جائزہ لینے پر ایک لاکھ نئی کمرشیل عمارتوں سے ٹیکسس کی رقم وصول طلب رہنے کا پتہ چل چکا ۔ علاوہ ازیں تقریبا 5 ہزار مکانات کے اسسمنٹ باقی ہیں اسسمنٹ کرنے پر مزید 80 کروڑ روپئے کی رقم بلدیہ کو حاصل ہونے کا امکان ہے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT