Friday , November 24 2017
Home / شہر کی خبریں / جائیداد ٹیکس کی ادائیگی میں کوئی رعایت نہیں

جائیداد ٹیکس کی ادائیگی میں کوئی رعایت نہیں

مقررہ وقت میں عدم ادائیگی پر بھاری جرمانہ کا انتباہ : کمشنر بلدیہ
حیدرآباد۔8فروری(سیاست نیوز) مالی سال 2017-18کے دوران جائیداد ٹیکس کی ادائیگی میں کوئی رعایت نہیں دی جائے گی۔ ڈاکٹر بی جناردھن ریڈی کمشنر مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد نے آج تمام زونل کمشنرس کے اجلاس کے دوران یہ بات کہی۔ انہوں نے جی ایچ ایم سی کے ٹیکس وصولی شعبہ کے ذمہ داروں سے بات چیت کے دوران بتایا کہ جاریہ سال جائیداد ٹیکس کی ادائیگی میں کوئی اسکیم یا رعایت کا اعلان نہیں کیا جائے گا بلکہ شہریوں کو قبل از وقت جائیداد ٹیکس ادا کرنے کی تاکید کرتے ہوئے مہم چلائی جائے گی۔ انہوں نے بتایا کہ شہر میں عوام میں شعور اجاگر کرنے کیلئے مہم چلائی جائے گی کہ وہ قبل از وقت جائیداد ٹیکس کی ادائیگی کو ممکن بنائیں تاکہ بھاری جرمانوں سے بچا جا سکے۔ ڈاکٹر بی جناردھن ریڈی نے کہا کہ جی ایچ ایم سی حدود میں جائیداد ٹیکس کی وصولی کو مؤثر بنانے کے لئے عہدیداروں کو متحرک ہونے کی ہدایت دی جا چکی ہے۔ انہوں نے کہا کہ جی ایچ ایم سی کی جانب سے وصول کیا جانے والا جائیداد ٹیکس ترقی کی شکل میں واپس شہریوں کو ہی حاصل ہوتا ہے اسی لئے شہریوں کو چاہئے کہ وہ جائیداد ٹیکس کی ادائیگی میں کوتاہی نہ کریں کیونکہ شہریوں کی جانب سے ادا کیا جانے والا جائیداد ٹیکس ہی شہر کی ترقی میں کلیدی اہمیت کا حامل ہوتا ہے۔ڈاکٹر بی جناردھن ریڈی نے اجلاس کے دوران عہدیداروں کو مشورہ دیا کہ وہ شہریوں میں شعور اجاگر کرنے کے ساتھ ساتھ انہیں جائیداد ٹیکس کی ادائیگی کی جانب راغب کروائیں تاکہ بروقت ٹیکس کی وصولی سے ترقیاتی کا موں کا سلسلہ جاری رہے گا۔ بتایا جاتا ہے کہ سال گذشتہ متعدد مرتبہ ٹیکس کی ادائیگی کیلئے متعدد رعایت اور اسکیمات کا اعلان کرتے ہوئے شہریوں کو جائیداد ٹیکس کی ادائیگی کیلئے راغب کروایا گیاتھا اور ماہ نومبر میں کرنسی تنسیخ کے فیصلہ کے بعد منسوخ کرنسی میں ٹیکس وصول کرنے کا فیصلہ کئے جانے کے بعد جی ایچ ایم سی کو بھاری ٹیکس وصول ہوا تھا اور اب اس ٹیکس وصولی کے ریکارڈ کی بنیاد پر شہریوں سے ٹیکس وصول کیا جائے گا اور کسی قسم کی کوئی رعایت نہیں دی جائے گی تاکہ قومی سطح پر سب سے زیادہ ٹیکس وصولی کا ریکارڈ برقرار رکھا جا سکے۔ڈاکٹر بی جناردھن ریڈی نے کہا کہ دونوں شہروں کے علاوہ نواحی علاقوں میں موجود نوآبادیاتی علاقوں میں بھی عوام سے جائیداد ٹیکس کی وصولی کیلئے خصوصی کاؤنٹرس کی تنصیب عمل میں لائی جائے تاکہ شہریوں کو ٹیکس کی ادائیگی میں کسی قسم کی کوئی مشکل نہ ہونے پائے علاوہ ازیں جی ایچ ایم سی کے موبائیل ایپلیکیشن کے ذریعہ ٹیکس کی ادائیگی کو فروغ دینے کی منصوبہ بندی بھی کی جائے گی۔

TOPPOPULARRECENT