Monday , December 11 2017
Home / شہر کی خبریں / جائیداد ٹیکس کی وصولی کے لیے بلدیہ کی سخت ترین کارروائی

جائیداد ٹیکس کی وصولی کے لیے بلدیہ کی سخت ترین کارروائی

برہم عوام نے عہدیداروں پر حملہ کردیا ۔ بنجارہ ہلز پولیس اسٹیشن میں کیس درج
حیدرآباد ۔ 12 ۔ مارچ : ( سیاست نیوز ) : مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد نے جائیداد ٹیکس کی وصولی میں سختی کا آغاز کردیا ہے ۔ آج بلدی عہدیداروں نے تقریبا مقامات پر سخت اقدامات کرتے ہوئے جائیداد ٹیکس وصول کیا اور کتہ پیٹ کے علاقہ میں ایک بڑے شاپنگ مال کو بھی مہر بند کردیا گیا ۔ تاہم بنجارہ ہلز کے علاقہ میں بلدی عہدیداروں کو سخت مسائل کا سامنا کرنا پڑا ۔ جائیداد ٹیکس کی وصولی کے لیے پہونچے ۔ بلدی عہدیداروں پر دو افراد نے مبینہ طور پر حملہ کردیا ۔ اور انہیں بدسلوکی کا نشانہ بنایا گیا ۔ اس واقعہ کے خلاف بلدی عہدیداروں نے بنجارہ ہلز پولیس میں شکایت درج کروائی جہاں پولیس نے آئی پی سی مختلف دفعات کے تحت مقدمہ درج کرلیا ہے ۔ بتایا جاتا ہے کہ سرکل 10 ( بی ) بنجارہ ہلز علاقہ کی ایک عمارت پر آج بلدی عہدیدار پہونچے اور انہوں نے مالکین سے ٹیکس ادا کرنے کے لیے کہا ۔ بلدی عہدیداروں کا الزام ہے کہ جیسے ہی ٹیکس کی بات کی گئی ۔ قیوم اور حکیم نامی افراد عہدیداروں سے اُلجھ پڑے اور انہیں گالی گلوج شروع کردی اور مبینہ طور پر دھکہ دیتے ہوئے انہیں رسوا کیا اور حملہ کی کوشش کی ۔ اس سلسلہ میں سب انسپکٹر بنجارہ ہلز مسٹر کرشنا نے بتایا کہ بلدیہ کے ایک عہدیدار سریش نے پولیس میں شکایت درج کروائی ہے ۔ اس سلسلہ میں پولیس نے مقدمہ درج کرلیا اور مصروف تحقیقات ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT