جاریہ سال بارش میں کمی کے اندیشے ‘ہرش وردھن کا بیان

نئی دہلی 2 جون (سیاست ڈاٹ کام ) پہلے ہی زرعی بحران اور کاشتکاروں کی خودکشیوںکا سامنا کرنے والی حکومت کیلئے ایک اور بری خبر آگئی ہے جس کے بموجب پیش قیاسی کی گئی ہے کہ جاریہ سال برسات کم ہوگی ۔ اس خبر کی وجہ سے ملک گیر سطح پر قحط پڑنے کے اندیشے پیدا ہوگئے ہیں۔ مرکزی وزیر برائے ارضیاتی سائنس ہرش وردھن نے آج ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہو

نئی دہلی 2 جون (سیاست ڈاٹ کام ) پہلے ہی زرعی بحران اور کاشتکاروں کی خودکشیوںکا سامنا کرنے والی حکومت کیلئے ایک اور بری خبر آگئی ہے جس کے بموجب پیش قیاسی کی گئی ہے کہ جاریہ سال برسات کم ہوگی ۔ اس خبر کی وجہ سے ملک گیر سطح پر قحط پڑنے کے اندیشے پیدا ہوگئے ہیں۔ مرکزی وزیر برائے ارضیاتی سائنس ہرش وردھن نے آج ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ میں پورے بوجھل دل کے ساتھ یہ اطلاع دے رہا ہوں کہ محکمہ موسمیات کی پیش قیاسی کے بموجب ہندوستان میں جاریہ سال معمول کی برسات کی صرف 88 فیصد بارش ہوگی۔ اس سے طویل مدتی بنیاد پر ملک پر مضر اثرات مرتب ہونے کے اندیشے ہیںاور ملک کے کئی علاقوں میں قحط پڑنے کے اندیشے بھی پیدا ہوگئے ہیں۔ اپریل میں ہندوستانی محکمہ موسمیات نے پیش قیاسی کی تھی کہ بارش اوسط سے کم یعنی 93 فیصد ہوگی ۔ تاہم اسے اوسط سے تھوڑا سا کم ظاہر کیا گیا تھا اب ترمیم شدہ اطلاع کے بموجب بارش صرف 88 فیصد ہوگی۔ جسے بارش کی قلت کے زمرے میں شامل کیا جاسکتا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT