Wednesday , November 22 2017
Home / شہر کی خبریں / جامعہ عثمانیہ میں کسی بھی قسم کے فیسٹیول کی ممانعت،تعلیمی ادارے کو تعلیم کی حد تک محدود رکھنا بہتر

جامعہ عثمانیہ میں کسی بھی قسم کے فیسٹیول کی ممانعت،تعلیمی ادارے کو تعلیم کی حد تک محدود رکھنا بہتر

حیدرآباد ۔ 8 ڈسمبر ۔ ( سیاست نیوز )  تعلیمی ادارے کو تعلیم کی حد تک محدود رکھا جائے تو بہتر ہے چونکہ یہ طلبہ کے مفادات کے تحفظ کے مترادف ہوگا ۔ جامعہ عثمانیہ کی جانب سے جاری کردہ ایک پریس نوٹ میں آج یونیورسٹی میں کسی قسم کے فیسٹول بالخصوص بیف ، پورک یا گاؤ پوجا کو منعقد نہ کرنے کا مشورہ دیتے ہوئے اس بات کی خواہش کی گئی ہے کہ عثمانیہ یونیورسٹی ریاست تلنگانہ کی اہم جامعہ ہے جو کہ اعلیٰ تعلیم کے علاوہ تحقیق کے لئے قائم کی گئی ہے ۔ یونیورسٹی کا بنیادی مقصد قطعی و خالص تعلیمی و تحقیق سے متعلق ہے اسی لئے اساتذہ ، طلبہ کے علاوہ غیرتدریسی و انتظامی ملازمین سے خواہش کی گئی ہے کہ وہ تعلیم و تحقیق کے علاوہ دیگر سرگرمیوں سے نہ صرف خود کو دور رکھیں بلکہ یونیورسٹی کیمپس میں اس طرح کی سرگرمیوں کی حوصلہ افزائی نہ کریں۔ یونیورسٹی انتظامیہ کی جانب سے جاری کردہ اعلامیہ میں بتایا گیا ہے کہ پوسٹ گرائجویشن کے پراکٹیکل امتحانات 7 ڈسمبر سے شروع ہوچکے ہیں اور تھیوری امتحانات کا آغاز 14 ڈسمبر سے ہونے والا ہے اسی لئے یونیورسٹی میں کسی قسم کی ایسی حرکت نہیں ہونی چاہئے جس سے تعلیم متاثر ہوتی ہو اور یونیورسٹی کے ماحول میں خوف و ہراس پیدا ہوتا ہو۔ یونیورسٹی انتظامیہ نے یونیورسٹی کے تمام شعبوں بالخصوص طلبہ و اساتذہ کے علاوہ ذمہ داروں سے توقع ظاہر کی کہ طلبہ کے عظیم تر مفادات اور یونیورسٹی میں برقراری امن کیلئے انتظامیہ سے تعاون کرتے ہوئے کوئی غیرتدریسی و غیرتحقیقی سرگرمیوں کے انعقاد کو بڑھاوا نہیں دیا جائے گا ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT