Sunday , February 25 2018
Home / Top Stories / جاوید اختر مذہبی مقامات پر لائوڈ اسپیکر کے استعمال کے مخالف

جاوید اختر مذہبی مقامات پر لائوڈ اسپیکر کے استعمال کے مخالف

بیان ’’بروقت‘‘ ، سونو نگم کا تاثر، فلم پدماوت اور اسکے فلم ساز سنجے لیلا بھنسالی کے خلاف احتجاج کا حوالہ

ممبئی۔9 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) کہنہ مشق گیت کار جاوید اختر نے گلوکار سونو نگم کی تائید کرتے ہوئے کہا کہ لائوڈ اسپیکرس عبادت گاہوں میں استعمال نہیں کیے جانے چاہئیں۔ گزشتہ سال سونو نگم نے بلند آہنگ خطبات کو جو لائوڈ اسپیکرس پر کیے جاتے ہیں، اپنی سلسلہ وار ٹوئٹر پیغامات میں غنڈا گردی قراردیا تھا جس کے نتیجہ میں کئی فتوے ان کے خلاف کولکتہ کے مذہبی رہنما نے جاری کیے تھے۔ اب جاوید اختر نے اس مسئلہ کو دوبارہ اٹھایا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس کو ریکارڈ میں شامل کیا جائے کہ میں مکمل طور پر ان تمام افراد سے بشمول سونو نگم متفق ہوں جنہوں نے لائوڈ اسپیکر کے مذہبی مقامات پر جیسے مساجد میں استعمال کرنے کی مخالفت کی تھی۔ ان میں وہ عبادت گاہیں بھی شامل ہیں جو رہائشی علاقوں میں واقع ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ٹوئٹر استعمال کرنے والے افراد نے انہیں ’’منافق‘‘ ہونے پر ان کی مذمت کی تھی۔ انہوں نے کہا کہ ’’میں ہر غلط بات کے خلاف آواز اٹھاتا ہوں۔ مشکل یہی ہے کہ آپ دوسروں کی غلطی کو مان سکتے ہیں مگر اپنی نہیں۔‘‘ جاوید اختر نے ان پر تنقید کرنے والوں کو جواب دیتے ہوئے کہا کہ بعض لوگ اس بات میں یقین نہیں رکھتے کہ کوئی بھی منصفانہ اور فرقہ پرست تعصب سے بالاتر ہوجائے کیوں کہ وہ خود بھی ایسے نہیں ہیں۔ اشوک پنڈت سے پوچھیئے کہ کتنی بار میں نے کشمیری پنڈتوں کے بارے میں ان سے بات کی ہے جو کبھی موجودہ چیف منسٹر آنجہانی مفتی محمد سعید اور ان کی دختر محبوبہ مفتی کی تائید کررہے تھے جو موجودہ چیف منسٹر ہیں۔ جاوید اختر نے ایک اور ٹوئٹر استعمال کرنے والے کو جواب دیتے ہوئے یہ بات کہی تھی۔ دریں اثناء سونو نگم نے کہا کہ جاوید اختر کی ان کو تائید ’’بروقت‘‘ ہے کیوں کہ انہیں صیانتی خطرہ لاحق ہے جس کی وجہ یہی مسئلہ ہے۔ جاوید اختر نے درحقیقت بروقت یہ موقف اختیار کیا ہے کیوں کہ غالباً انہیں احساس ہوگیا ہے کہ گزشتہ دو دن سے افواہیں گرم ہیں جو ان کی حفاظت کے بارے میں ہیں۔ صنعت فلم سازی کے بیشتر افراد یہ اقدام یعنی ان کی تائید کرنے سے قاصر رہے جس کی کئی وجوہات ہیں۔ سونونگم ایک خانگی چینل پر سوال کا جواب دے رہے تھے۔ انہوں نے اظہار افسوس کیا کہ صنعت کے سیاسی شخص نے اس مسئلہ پر ان کی تائید نہیں کی لیکن لوگ تیزی سے چلانے لگے کہ انہیں سنجے لیلا بھنسالی کی فلم پدماوت ایک غلطی ہے۔

TOPPOPULARRECENT