Monday , December 11 2017
Home / اضلاع کی خبریں / جدید کلکٹریٹ شمس آباد میں قائم کرنے کاپرزور مطالبہ

جدید کلکٹریٹ شمس آباد میں قائم کرنے کاپرزور مطالبہ

شادنگر ۔ 22 اکٹوبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) جدید ضلع رنگاریڈی کے موضع کونگرا کلاں میں جدید کلکٹریٹ کے قیام کے خلاف پنشن آفس شادنگر میں جے اے سی کی قیادت میں کل جماعتی اجلاس کا انعقاد عمل میں لایا گیا ۔ جدید کلکٹریٹ موضع کونگرا کلاں میں قیام کو لیکر شادنگر کے حلقہ کی عوام میں سخت ناراضگی اور بے چینی پائی جا رہی ہے ۔ سابق ایم ایل اے چولہ پلی پرتاپ ریڈی نے شادنگر میں منعقدہ کل جماعتی اجلاس سے مخاطب کرتے ہوئے کہاکہ موضع کونگرا کلاں میں کلکٹریٹ کے قیام کی سخت مخالفت کی جدید کلکٹر آفس تک عام آدمی کا پہنچا کافی دشوار کن ہے ۔ انہوں نے کہاکہ کلکٹر آفس کو نگراکلاں پہونچنے کار یا پھر ٹو وہیلر گاڑی رکھنے والے ہی جاسکتے ہیں ۔جدید قائم کئے جانے والے کلکٹر آفس موضع کونگرا کلاں کیلئے نہ بس کی سہولت اور نہ ہی ٹرین کی سہولت ہے ۔ سرکاری دفاتر عام آدمی کی سہولت والے مقام پر قائم کیا جانا چاہئے ۔ کونگرا کلاں میں جدید تعمیر کئے جانے والے کلکٹریٹ آفس کو فوری تبدیل کرتے ہوئے تلنگانہ چیف منسٹر کے سی آر اور اعلی عہدیدار اس ضمن میں سنجیدگی کے ساتھ غور کرتے ہوئے شمس آباد میں قائم کرنے کا پرزور مطالبہ کیا ۔ سابق وزیر ڈاکٹر پی شنکرراؤ نے کہاکہ تلنگانہ حکومت بغیر کسی سونچے سمجھے فیصلہ کرتے ہوئے عام آدمی پر کلکٹریٹ کے قیام کے فیصلہ کو صادر کر دیا ۔ تلنگانہ حکومت نے کلکٹر آفس کے قیام کے فیصلہ سے عوام کو شدید دشواریوں کا سامنا کرنا پڑھے گا ۔ انہوں نے اس بات کی بھی وضاحت کی کہ تلنگانہ حکومت بالخصوص چیف منسٹر کے سی آر مذکورہ فیصلہ میں کسی بھی طرح کی کوئی تبدیلی نہیں لیں گے ۔ ایڈوکیٹ راماسوامی نے اجلاس سے مخاطب کرتے ہوئے کہاکہ کونگراکلاں نہیں بلکہ یہ کیرکیری کلاں ہے ۔ انہوں نے الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ ابراہیم پٹنم اور مہیشورم کی لیڈرشپ کو خوش کرنے کے لئے تلنگانہ چیف منسٹر کے سی آر نے فیصلہ لیاہے ۔ ٹی آر ایس قائد شادنگر راجہ راپرساد نے مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ شادنگر حلقہ میں واقع تمام گرام پنچایتوں کے اجلاسوں ‘ منڈل کے اجلاسوں ‘ میونسپل کے اجلاس میں موضع کونگرکلاں کے متعلق متحد ہ طورپر فیصلہ کرتے ہوئے مخالفت کی اپیل کی ۔

TOPPOPULARRECENT