Friday , February 23 2018
Home / دنیا / جرمنی کی نصف آبادی دوبارہ انتخابا ت کے حق میں

جرمنی کی نصف آبادی دوبارہ انتخابا ت کے حق میں

برلن۔ 22 نومبر (سیاست ڈاٹ کام)جرمنی میں نئی حکومت کی تشکیل کیلئے اتحاد کو لے کر چل رہی بات چیت منقطع ہوجانے کے بعد ملک کی نصف آبادی پھر سے انتخابات کرانے کے حق میں ہے جس سے ملک میں ایک مرتبہ پھر سیاسی بحران کے آثار پیدا ہوگئے ہیں۔ آئی این ایس اے کی جانب سے اخبار ’’بلڈ ڈیلی ‘‘کے لئے کئے گئے سروے کے مطابق 49.9% لوگ پھر سے انتخابات کرانے کے حق میں ہیں جبکہ 48.5% لوگوں کا کہنا ہے کہ سینٹر لیفٹ سوشل ڈیموکریٹک (ایس پی ڈی) نے حکومت بنانے کیلئے اتحاد کرنے سے انکار کرکے صحیح کیا جبکہ 18% اتحاد کے حق میں ہیں۔سروے میں بتایا گیا ہے کہ اتحاد کے لئے کی جانے والی بات چیت کی ناکامی کیلئے 28% لوگوں نے ایف ڈی پی کے لیڈر کریشین لینڈر کو ذمہ دار ٹھہرایا ہے جبکہ 27% افراد نے چانسلر انجیلا مرکل کو اور 13% افراد نے گرینس کے نات سیم اوزڈیمیئر کو ذمہ دار ٹھہرایا ہے ۔سروے میں 10 میں سے 4 لوگوں نے کہا کہ اگر انتخابات کرائے گئے تو مرکل پھر سے چانسلر بنیں گی جبکہ 24% لوگوں نے کریشین لینڈر کو بتایا۔ مرکل کی پارٹی اتحادی سی ڈی یو ؍سی ایس یو نے اسی برس ستمبر میں انتخابات میں سے زیادہ ووٹ حاصل کئے تھے لیکن اکثریت نہیں مل پائی تھی۔ حکومت سازی کے لئے اتحاد کے لئے طویل بات چیت غیرفیصلہ کن رہی۔ مرکل نے حالانکہ کہا کہ انہیں اتحاد کو لے کر بات چیت ٹوٹ جانے کا افسوس ہے ۔

TOPPOPULARRECENT