جرمنی کی 24 برس بعد چوتھے ورلڈکپ پر نظریں مرکوز

بیلوہاریزونٹے 9 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) فیفا ورلڈکپ 2014 ء کی میزبان ٹیم برازیل کو ٹورنمنٹ کے پہلے سیمی فائنل میں 7-1 سے شکست دیتے ہوئے فائنل میں شاندار طریقہ سے رسائی حاصل کرنے والی جرمنی کی ٹیم کی نظریں اب ورلڈکپ خطاب پر مرکوز ہوچکی ہیں اور وہ 24 برس بعد پہلے اور مجموعی طور پر چوتھے ورلڈکپ کے حصول کی خواہاں ہے۔ اتوار کو کھیلے جانے والے خ

بیلوہاریزونٹے 9 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) فیفا ورلڈکپ 2014 ء کی میزبان ٹیم برازیل کو ٹورنمنٹ کے پہلے سیمی فائنل میں 7-1 سے شکست دیتے ہوئے فائنل میں شاندار طریقہ سے رسائی حاصل کرنے والی جرمنی کی ٹیم کی نظریں اب ورلڈکپ خطاب پر مرکوز ہوچکی ہیں اور وہ 24 برس بعد پہلے اور مجموعی طور پر چوتھے ورلڈکپ کے حصول کی خواہاں ہے۔ اتوار کو کھیلے جانے والے خطابی مقابلے میں جرمنی کا سامنا دوسری سیمی فائنل کی فاتح ٹیم سے ہوگا اور جرمنی کی ٹیم کی خواہش ہے کہ وہ 24 برس بعد پہلا ورلڈکپ خطاب حاصل کرلے۔ برازیل کے خلاف شاندار کامیابی پر اظہار خیال کرتے ہوئے اِس کے کھلاڑی تھامس میولر نے کہا ہے کہ ہم ہمارے مقصد سے ہنوز دور ہیں لیکن اُمید ہے کہ ہم یہ خطاب حاصل کرلیں گے۔

جرمنی کے لئے اِس کے اہم کھلاڑی ٹونی کروز اور اینڈری شرلر نے برازیل کے خلاف فی کس 2 گول بنانے کے علاوہ ٹیم کے سینئر کھلاڑی مرسیلو کلوز نے ورلڈکپ میں اپنا 16 واں اور عالمی ریکارڈ گول اسکور کیا ہے کیونکہ اِس گول کے ذریعہ وہ ورلڈکپ میں سب سے زیادہ گول بنانے کے ریکارڈ میں برازیل کے سابق کھلاڑی رونالڈو کو پیچھے چھوڑ دیا ہے۔ برازیل کے خلاف مین آف دی میچ کا اعزاز حاصل کرنے والے کروز نے کہاکہ برازیل کے خلاف ہم نے ناقابل یقین مظاہرہ کیا ہے لیکن ایک اور مقابلہ ہنوز باقی ہے جہاں دنیا کی ایک اور بہترین ٹیم سے ہمارا سامنا ہوگا اور اِس مقابلہ میں دونوں ٹیموں کے لئے کامیابی کے 50:50 مواقع دستیاب رہیں گے۔

TOPPOPULARRECENT