Thursday , November 23 2017
Home / جرائم و حادثات / جعلی دو ہزار کی کرنسی کی تیاری ، انجینئرنگ کے طلبہ گرفتار

جعلی دو ہزار کی کرنسی کی تیاری ، انجینئرنگ کے طلبہ گرفتار

نقلی رقم ضبط ، شمس آباد اور راجندر نگر پولیس کی کارروائی
حیدرآباد /9 فروری ( سیاست نیوز ) آسان طریقہ سے رقم حاصل کرنے کیلئے دو جعلسازوں کا شکار انجینئرنگ کے طلبہ قانونی رسہ کشی کی گرفت میں آگئے ۔ جنہیں پولیس نے بدمعاشوں سمیت گرفتار کرلیا ۔ شمس آباد اسپیشل آپریشن ٹیم اور راجندر نگر پولیس کی مشترکہ کارروائی میں نقلی کرنسی کی ایک ٹولی کو گرفتار کرلیا گیا ۔ پولیس نے اس ٹولی کو بے نقاب کرتے ہوئے 4 افراد بشمول 2 انجینئرنگ کے طلبہ کو گرفتار کرلیا اور ان کے قبضہ سے 34 لاکھ 86 ہزار روپئے کی نقد کرنسی کے علاوہ نقلی 2 ہزار کرنسی نوٹوں کی تیاری میں استعمال کی جارہی اشیاء کو بھی ضبط کرلیا ۔ پولیس ذرائع کے مطابس اس ٹولی کے اصل سرغنہ و منصوبہ ساز 40 سالہ وجئے شرما ساکن بوئن پلی ۔ محتشم علی خان 45 سالہ ساکن حمایت نگر کے علاوہ انجینئیرنگ کے طالب علموں عبدالصمد اور واجد الدین خان کو گرفتار کرلیا ۔ ایک انجینئیرنگ کالج کی کینٹن میں خریداری کے دوران دی گئی نقلی کرنسی کے بعد یہ واقعہ منظر عام پر آیا اور پولیس نے کارروائی کے دوران اصل سرغنہ وجئے شرما تک رسائی حاصل کرلی اور اسے بھی گرفتار کرلیا ۔ وجئے شرما اور محتشم علی خان دونوں نے جو شدید مالی پریشانی کا شکار تھے ۔ یہ منصوبہ تیار کیا اور محتشم نے اس منصوبہ کے بعد دونوں انجینئرنگ کے طلبہ کو اپنے جال میں پھانسا اور 2 لاکھ روپئے ان کے حوالے کرتے ہوئے کالج کی کینٹن اور مالس میں خریداری کے دوران ان کرنسی نوٹوں کے استعمال کا مشورہ دیا جس کے بعد واقعہ منظر عام پر آیا ۔

TOPPOPULARRECENT