جموں وکشمیر میں پنچایت انتخابات کے تیسرے مرحلے کی پولنگ شروع

سری نگر۔ 24 نومبر ( سیاست ڈاٹ کام) جموں وکشمیر میں ہفتہ کی صبح پنچایتی انتخابات کے تیسرے مرحلے کی پولنگ کا آغاز ہوگیا ۔ پولنگ کا عمل دوپہر دو بجے تک جاری رہے گا جس کے بعد ووٹوں کی گنتی کا عمل شروع ہوگا۔سیکورٹی ذرائع نے بتایا کہ پولنگ کے لئے سیکورٹی کے غیرمعمولی انتظامات کئے گئے ہیں۔ پہلے دو مرحلے کی طرح اس مرحلے میں بھی ریاست بالخصوص صوبہ جموں میں پولنگ مراکز پر رائے دہندگان کی لمبی قطاریں لگ گئی ہیں۔واضح رہے کہ ریاست کی دو بڑی علاقائی جماعتیں نیشنل کانفرنس اور پی ڈی پی بلدیاتی انتخابات کی طرح پنچایتی انتخابات کا بھی بائیکاٹ کررہی ہیں۔ دونوں جماعتوں کا مطالبہ ہے کہ مرکزی سرکار پہلے دفعہ 35 اے پر اپنا موقف واضح کرے اور پھر وہ کسی انتخابی عمل کا حصہ بنیں گی۔ قومی سطح کی دو جماعتوں سی پی آئی ایم اور بی ایس پی نے بھی ان انتخابات کے بائیکاٹ کا اعلان کر رکھا ہے ۔کشمیر کی علیحدگی پسند جماعتوں بالخصوص مشترکہ مزاحمتی قیادت اور جنگجو تنظیموں نے لوگوں کو ان انتخابات سے دور رہنے کے لئے کہا ہے ۔ انہوں نے آج پولنگ والے علاقوں میں ہڑتال کی کال دے رکھی ہے ۔ریاست میں پنچایتی انتخابات7 سال کی مدت کے بعد منعقد کئے جارہے ہیں۔ آخری بار یہ انتخابات سنہ 2011 میں کرائے گئے تھے ۔ ریاست میں 13 برس کے طویل عرصے کے بعد اکتوبر میں منعقد ہوئے بلدیاتی انتخابات کے برعکس پنچایتی انتخابات غیرسیاسی بنیادوں پر منعقد کئے جارہے ہیں اور ان میں بیلٹ پیپر کا استعمال کیا جا رہا ہے ۔ تاہم غیرسیاسی بنیادوں پر کرائے جانے کے باوجود سیاسی جماعتوں نے اپنے امیدواروں کو میدان میں اتارا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT