Thursday , September 20 2018
Home / ہندوستان / جموں و کشمیر میں ایک ڈاکٹر برطرف اور دوسرا معطل

جموں و کشمیر میں ایک ڈاکٹر برطرف اور دوسرا معطل

جموں ۔ 5 ۔ جون (سیاست ڈاٹ کام) جموں و کشمیر کے وزیر صحت چودھری لال سنگھ کے اچانک دورہ کے موقع پر غیر حاضر ایک ڈاکٹر کو خدمات سے برطرف اور دوسرے کو معطل کردیا گیا۔انہوں نے کل جموں ریجن میں ضلع اودھم پور کے ٹیکری میں ایک پرائمری ہیلت سنٹر کا اچانک معائنہ کیا جہاں پر متعلقہ ڈاکٹرس غائب پائے گئے۔وزیر صحت نے اس معاملہ کا سخت نوٹ لیتے ہوئے ڈ

جموں ۔ 5 ۔ جون (سیاست ڈاٹ کام) جموں و کشمیر کے وزیر صحت چودھری لال سنگھ کے اچانک دورہ کے موقع پر غیر حاضر ایک ڈاکٹر کو خدمات سے برطرف اور دوسرے کو معطل کردیا گیا۔انہوں نے کل جموں ریجن میں ضلع اودھم پور کے ٹیکری میں ایک پرائمری ہیلت سنٹر کا اچانک معائنہ کیا جہاں پر متعلقہ ڈاکٹرس غائب پائے گئے۔وزیر صحت نے اس معاملہ کا سخت نوٹ لیتے ہوئے ڈائرکٹر ہیلت سرویس کو ہدایت دی کہ ڈاکٹر شیوانی کو معطل کردیاجائے اور ڈاکٹر شیکھا کو خدمات سے برطرف کردیا جائے جنہیں نیشنل رورل ہیلت مشن کے تحت تقرر کیا گیا تھا ۔اپنے دورہ کے موقع پر وزیر موصوف نے آفس کے احاطہ میں پرائمری ہلت سنٹر کے عہدیداروں کو شراب نوشی کرتے ہوئے پکڑا لیا۔ پولیس نے طبی جانچ کے بعد فارمیسسٹ لکشمی دوجے اور نرسنگ ارڈالی اشوک کمار کو گرفتار کرلیا جبکہ دیگر دو عہدیدار بھوپیندر سنگھ (ڈینٹل ٹکنیشن ) اور درکیش کمار جائے وقوع سے فرار ہوگئے۔ وزیر صحت نے متعلقہ پو لیس اسٹیشن کو ہدایت دی کہ مفرور عہدیداروںکو فی الفور گرفتار کرلیا۔ بعد ازاں وزیر صحت نے پی ایچ سی گی کا دورہ کیا تو اسٹاف کے 16 ارکان بشمول میڈکوس اور فارماسسٹ ڈیوٹی سے غیر حاضر تھے جس پر انہوں نے وضاحت طلبی کیلئے نوٹس جاری کرنے کی ہدایت دی۔

TOPPOPULARRECENT