Wednesday , September 26 2018
Home / Top Stories / جموں و کشمیر میں علیحدگی پسندوں کی ہڑتال

جموں و کشمیر میں علیحدگی پسندوں کی ہڑتال

احتیاطی اقدام کے طور پر کرفیو جیسی تحدیدات عائد
سری نگر۔27 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) علیحدگی پسندوں کی وادی کشمیر میں ہڑتال کے پیش نظر نظم و قانون کی برقراری کے لیے شہر سری نگر کے چند علاقوں میں تحدیدات عائد کردی گئیں۔ 7 پولیس اسٹیشنوں نے دائرہ کار میں سری نگر میں تحدیدات عائد کی گئیں۔ ضلع مجسٹریٹ (ڈپٹی کمشنر) سری نگر سید عابد رشید شاہ نے کہا کہ سخت تحدیدات رائناوار، سفاکدل، نوہٹا، خانیار اور ایم آر گنج پولیس اسٹیشنوں کے دائرہ کار میں عائد کی گئی ہیں۔ جزوی تحدیدات میسوما اور کرالخود علاقوں میں جاری ہیں۔ احتیاطی اقدامات کے طور پر یہ تحدیدات عائد کی گئی ہیں۔ حریت کانفریس کے دونوں گروپس کے صدور سید علی شاہ گیلانی اور میر واعظ عمر فاروق، جے کے ایل ایف یٰسین ملک نے وادی کشمیر میں فوجی کی نوجوانوں کے ساتھ بدسلوکی عوام کو مبینہ طور پر ہراساں کرنے کے خلاف بطور احتجاج ہڑتال کا اعلان کیا گیا ہے۔ ہڑتال سے پوری وادی میں معمولات زندگی مفلوج ہوگئے۔ دکانیں، پٹرول پمپس اور دیگر تجارتی ادارے پورے کشمیر میں بند رہے۔ سرکاری ٹرانسپورٹ سڑکوں سے ہٹالی گئیں لیکن خانگی گاڑیاں، ٹیکسیاں اور آٹو رکشا چلتے ہوئے دیکھے گئے۔

TOPPOPULARRECENT