Monday , July 16 2018
Home / Top Stories / جناب سید وقار الدین کی خدمات کااعتراف

جناب سید وقار الدین کی خدمات کااعتراف

عرب لیگ کے باوقار ایوارڈ کی پیشکشی ۔ دہلی میں تقریب ، 22 ممالک کے سفارتکاروں کی شرکت
نئی دہلی۔/3 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) ملکوں کی سب سے بڑی تنظیم عرب لیگ نے اپنے 73ویں یوم تاسیس کے موقع پر کل شام کو یہاں عمان کے سفارت خانہ میں ایک شاندار تقریب کا اہتمام پورے تزک و احتشام کے ساتھ منعقد کیا۔ اس موقع پر ہندوستان اور عرب دنیاکے درمیان رشتوں کو مضبوط و مستحکم کرنے کی بیش بہا خدمات انجام دینے کا اعتراف کرتے ہوئے انڈو عرب لیگ حیدرآباد کے چیرمین اور روزنامہ رہنمائے دکن کے مدیر اعلیٰ جناب سید وقار الدین کو ایوارڈ پیش کیا گیا۔ جو پہلے ایسے ہندوستانی ہیں جنہیں اس ایوارڈ سے سرفراز کیا گیا۔ یہ ایوارڈ وزیر مملکت برائے امور خارجہ ایم جے اکبر اور سعودی عرب کے سفیر و نیز دیگر عرب سفراء کے بدست جناب وقار الدین کو پیش کیا گیا۔سعودی سفیر الساطی نے عرب و ہندوستان کے رشتوں کو تاریخی قرار دیتے ہوئے کہاکہ سید وقار الدین کی اس سلسلہ میں خدمات بے مثال ہیں۔ سعودی سفیر نے کہا کہ انڈوعرب لیگ حیدرآباد نے اُن کی قیادت میں گذشتہ نصف صدی سے زیادہ عرصہ سے عرب دنیا و ہندوستان کے درمیان روابط کو مستحکم بنانے میں اہم کردار ادا کیا اور کررہی ہے۔ قبل ازیں عرب لیگ جشن کی سربراہ عالیہ غنم نے جناب وقار الدین کا تعارف کراتے ہوئے کہا کہ اُن کی خدمات کا کوئی بدل نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ انڈو عرب لیگ نے جو کارنامے انجام دیئے ہیں وہ تاریخی ہیں۔ اور یہ ایوارڈ ایک چھوٹا سا اعتراف ہے جبکہ وقار الدین کی خدمات بیش بہا ہیں۔اس موقع پر فلسطین، اُردن، متحدہ عرب امارات، بحرین، سوڈان ، صومالیہ الجزائر ، قطر، یمن، عراق اور دیگر افریقی ممالک کے سفارت کاروں نے وقار الدین کو فرداً فرداً مبارکباد پیش کی اور اُن کی خدمات کو سراہا۔ سفارت کاروں کے کہکشاں میں یہ ایوارڈ وقار الدین کو پیش کیا گیا تھا۔ اس موقع پر متعدد سرکردہ سیاسی ، سماجی، مذہبی قائدین بھی موجود تھے ان میں قابل ذکر ڈاکٹر کے کیشورائو شامل ہیں۔ حیدرآباد سے بڑی تعداد میں لوگوں نے شرکت کی ۔ اُن میں انڈو عرب لیگ حیدرآباد کے وائس چیرمین ڈاکٹر میر اکبر علی خان، ڈاکٹر معین الدین حبیبی، مقبول احمد، جمیل احمد خان، گواہ کے ایڈیٹر ڈاکٹر سید فاضل حسین پرویز اور دیگر قابلِ ذکر ہیں۔ چیرمین انڈو عرب لیگ جناب سید وقار الدین نے عرب لیگ کے باوقار ایوارڈ کو ایک اعزاز قرار دیتے ہوئے کہا کہ ( باقی سلسلہ صفحہ 9 پر )

TOPPOPULARRECENT