Saturday , May 26 2018
Home / Top Stories / جناب محمد عبدالقدیر مرحوم نے بے لوث خدمت کے ذریعہ مقبولیت حاصل کی، ایم ڈی ایف ادارہ سیاست کا تعزیتی جلسہ، جناب زاہد علی خاں کا خطاب

جناب محمد عبدالقدیر مرحوم نے بے لوث خدمت کے ذریعہ مقبولیت حاصل کی، ایم ڈی ایف ادارہ سیاست کا تعزیتی جلسہ، جناب زاہد علی خاں کا خطاب

حیدرآباد ۔ 14 نومبر (دکن نیوز) جناب زاہد علی خان ایڈیٹر روزنامہ سیاست نے آج کہا کہ حیدرآبادی شرافت کا نام محمد عبدالقدیر ہے جنہوں نے اپنی بے لوث خدمت کے ذریعہ مقبولیت حاصل کی اور سب کے دلوں میں اپنا بلند مقام پیدا کیا۔ وہ آج ادارہ سیاست اور ایم ڈی ایف کے زیراہتمام عبدالقدیر مرحوم کی یاد میں منعقدہ تعزیتی جلسہ سے صدارتی خطاب کررہے تھے۔ گولڈن جوبلی ہال (سیاست) میں منعقدہ اس تعزیتی جلسہ میں شہ نشین پر جناب افتخار حسین سکریٹری فیض عام ٹرسٹ، جناب ای اسمعیل سابق رکن حقوق انسانی کمیشن، جناب عابد صدیقی صدر ایم ڈی ایف اور ایم اے حمید موجود تھے۔ جناب زاہد علی خان نے کہا کہ ایم ڈی ایف کی کارکردگی کو مؤثر بنانے میں انہوں نے جی جان سے محنت کی اور نہایت خوش اسلوبی کے ساتھ ملت کی خدمت کا کام انجام دیا۔ اس موقع پر جناب زاہد علی خان نے اعلان کیا کہ عبدالقدیر کی خدمات کو خراج عقیدت پیش کرنے کے طور پر ادارہ سیاست اور فیض عام ٹرسٹ کی جانب سے پانچ مسلم لڑکوں اور لڑکیوں کو ان کی تعلیم (کے جی تا پی جی) کیلئے اسکالر شپس دیئے جائیں گے جس کے ذریعہ ان کی یاد اور ان کے کام کو ہمیشہ کیلئے باقی رکھا جاسکے گا۔ جناب زاہد علی خان نے کہا کہ سیاست اور ایم ڈی ایف کے دو بہ دو ملاقات پروگرام کے ذریعہ سینکڑوں رشتے طئے ہوئے ہیں جس کے پس پردہ بلاشبہ جناب ایم اے قدیر اور ایم ڈی ایف کے عہدیدار و کارکن ذمہ دار ہیں۔ جسٹس ای اسمعیل نے کہا کہ عبدالقدیر نے مسلم شادیوں کے مسئلہ کو حل کرنے کیلئے اپنی زندگی وقف کردی تھی اور وہ اس طرح ہمہ تن مصروف رہتے جیسے ملازمت کررہے ہوں۔ انہوں نے بلامعاوضہ اور بے غرض خدمت انجام دی۔ جناب عابد صدیقی نے کہا کہ جناب محمد عبدالقدیر ایک عرصہ تک محکمہ رجسٹریشن میں سب رجسٹرار کے عہدہ پر فائز رہے اور وظیفہ پر سبکدوش ہونے کے بعد انہوں نے اپنے آپ کو خدمت خلق سے وابستہ کرلیا۔ وہ نہایت صبر و سکون کے ساتھ والدین و سرپرستوں کے مسائل حل کرنے اور دوبہ دو پروگرام کو خوب سے خوب تر بنانے میں شبانہ روز کام کرتے۔ انہوں نے کہا کہ سوشیل ورکرس کیلئے جناب قدیر کی زندگی قابل تقلید ہے۔ جناب ایم اے حمید نے کہا کہ عبدالقدیر ایک شریف النفس، ملنسار، منکسرالمزاج اور نہایت نیک شخصیت کے مالک تھے۔ ان کے انتقال سے ادارہ سیاست اور ایم ڈی ایف میں بڑا خلاء پیدا ہوا ہے۔ اس جلسہ میں عبدالقدیر کے صاحبزادگان عبداللطیف، عبدالرشید، دختران ثمینہ ناز، شاہانہ ناز اور ان کے داماد سلمان معز الدین اور دیگر ارکان خاندان کے علاوہ ڈاکٹر ایس اے مجید، میر انورالدین، خدیجہ سلطانہ، محمد شاہد حسین، احمد صدیقی مکیش، آرگنائزنگ سکریٹری ڈاکٹر دردانہ، لطیف النساء، سیدہ محمدی، سیدہ تسکین، آمنہ فاطمہ، محمد نصراللہ خاں، انیس النساء اور ایم ڈی کے عہدیداران و کارکنوں کی کثیر تعداد شریک تھی۔ اس جلسہ تعزیت کو جناب شہباز احمد خان، ڈاکٹر ناظم علی، ڈاکٹر سیادت علی، سید اصغر حسین، صالح بن عبداللہ باحاذق اور دوسروں نے مخاطب کیا۔ جناب سید الیاس باشاہ نے دعائے مغفرت کی۔ جناب ایم اے حمید نے آخر میں شکریہ ادا کیا۔

 

TOPPOPULARRECENT